ونڈوز ایکس پی کا استعمال ختم کردیں ورنہ۔۔۔۔

ونڈوز ایکس پی کا استعمال ختم کردیں ورنہ۔۔۔۔
ونڈوز ایکس پی کا استعمال ختم کردیں ورنہ۔۔۔۔

  

نیو یارک( بیورورپورٹ)مائیکروسافٹ نے ایک بار پھر ونڈوز ایکس پی استعمال کرنے والے صارفین سے کہا ہے کہ وہ اس آپریٹنگ سسٹم کی سپورٹ ختم ہونے سے پہلے جدید آپریٹنگ سسٹمز پر منتقل ہوجائیں۔ بصورت دیگر انہیں زیرو ڈے تھریڈز کا سامنا رہے گا۔مائیکروسافٹ 8 اپریل 2014ء کے بعد سے ونڈوز ایکس پی کی سپورٹ فراہم کرنا بند کررہاہے اوراس میں دریافت ہونی والی خامیوں کے لئے کوئی سکیوریٹی پیچز ریلیز نہیں کئے جائیں گے۔ یاد رہے کہ مائیکروسافٹ ونڈوز ایکس پی تقریباً 12 سال پرانا آپریٹنگ سسٹم ہے جسے آج بھی صارفین کی ایک بڑی تعداد استعمال کررہی ہے۔ مائیکروسافٹ اب تک اس آپریٹنگ سسٹم کی تین سروس پیکز ریلیز کرچکا ہے جو اس کی مقبولیت کا منہ بولتا ثبوت ہے۔اب جبکہ مائیکروسافٹ کی جانب سے اس آپریٹنگ سسٹم کی سپورٹ فراہم کرنا بند کی جارہی ہے، اس لئے یہ بات واضح ہے کہ 8 اپریل 2014ء کے بعد ونڈوز ایکس پی میں دریافت ہونی والی خامیاں اس میں ہمیشہ موجود رہیں گی۔ کچھ ماہرین تو یہاں تک کہہ رہے ہیں کہ ہیکرز نے ونڈوز ایکس پی کی کچھ خامیوں کو اب تک منظر عام پر ہی نہیں لایا۔ وہ انہیں اس وقت استعمال کرتے ہوئے صارفین کو نقصان پہنچائیں گے جب مائیکروسافٹ اس آپریٹنگ سسٹم کو مزید سکیوریٹی فراہم کرنے سے ہاتھ کھڑے کرلے گا۔ یہی وجہ ہے کہ مائیکروسافٹ بار بار اپنے صارفین کو جدید آپریٹنگ سسٹمز جیسے ونڈوز 7 یا ونڈوز 8 پر منتقل ہونے کا مشورہ دےرہا ہے۔

یہ بات بھی قابل غور ہے کہ مائیکروسافٹ نے اب تک سب سے زیادہ سکیوریٹی پیجز ونڈوز ایکس پی کے لئے ہی جاری کئے ہیں۔ جس سے اس آپریٹنگ سسٹم کی ناقص سکیوریٹی کا واضح اظہار ہوتا ہے۔پاکستان میں صارفین کی بہت بڑی تعداد اب بھی ونڈوز ایکس پی استعمال کررہی ہے۔ پاکستان سے ماہنامہ کمپیوٹنگ کی ویب سائٹ ملاحظہ کرنے والے قارئین کی ستر فی صد تعداد ونڈوز ایکس پی استعمال کرتے ہوئے، ویب سائٹ براؤز کرتی ہے۔تقریباً آٹھ ماہ بعد جب ونڈوز ایکس پی کے لئے سکیوریٹی پیچز کی فراہمی بند ہوجائے گی، پاکستانی کمپیوٹر صارفین کی ایک بڑی تعداد وائرس حملوں کی ذد میں آسکتے ہیں۔ لہذا ہم بھی آپ کو مائیکروسافٹ کے مشورے پر کان دھرنے کا مشورہ دیں گے۔

مزید : سائنس اور ٹیکنالوجی