مینگورہ کے مقامی سیاستدان ن لیگ اور پیپلز پارٹی چھوڑ کر تحریک انصاف میں شامل

مینگورہ کے مقامی سیاستدان ن لیگ اور پیپلز پارٹی چھوڑ کر تحریک انصاف میں شامل
مینگورہ کے مقامی سیاستدان ن لیگ اور پیپلز پارٹی چھوڑ کر تحریک انصاف میں شامل

  

سوات(بیورورپورٹ)مینگورہ کی یونین کونسل رنگ محلہ کے سابق کونسلر محمداقبال نے پی پی پی کیساتھ 38سالہ جبکہ حاجی رستم خان نے مسلم لیگ ن کیساتھ چالیس سالہ ناطہ توڑ کر ساتھیوں اورخاندانوں سمیت پاکستان تحریک انصاف میں شمولیت اختیار کرلی  جس کا باضابطہ اعلان پریس کانفرنس کے دوران کیاگیا۔

انہوں نے کہاکہ زندگی کے کئی سال پی پی پی اورمسلم لیگ ن میں گزارے ،اس دوران خدمت کی پارٹی کیلئے کام کیا مگر انہیں ان پارٹیوں نے وہ مقام نہیں دیا جس کے وہ مستحق تھے لہٰذہ تحریک انصاف میں شمولیت اختیار کررہے ہیں اورباقی زندگی اسی پلیٹ فارم سے عوام کی خدمت کرتے ہوئے گزاریںگے۔

اس موقع پر ڈیڈک چیئرمین رکن صوبائی اسمبلی فضل حکیم خان نے نئے شامل ہونے والوں کو مبارکباد دی اور یقین دلایا کہ پی ٹی آئی میں انہیں احترام ملے گا،انہوںنے کہاکہ تحریک انصاف کی بہترپالیسیوں کا نتیجہ ہے کہ لوگ مسلسل دیگر سیاسی پارٹیوں سے ناطہ توڑ کر ہمارے قافلے میں شامل ہورہے ہیں جس سے ثابت ہورہاہے کہ آئندہ بلدیاتی انتخابات میں بھی کامیابی پی ٹی آ ئی کی ہوگی۔

انہوںنے کہاکہ پارٹی کارکنوں کی محنت کا نتیجہ ہے کہ عوام پی ٹی آئی کی طرف مائل ہورہے ہیں جس کے سبب وہ ایک مضبوط قوت بن چکی ہے ،انہوںنے کہاکہ پی ٹی آئی کی پالیسیاں واضح ہیں جس میں نہ کرپشن چل سکتی ہے اور نہ ہی جھوٹ بلکہ ہم بغیر کسی لالچ کے عوام کی خدمت کررہے ہیں اوراس مقصد کیلئے ہروقت عوام کے درمیان رہتے ہیں،پریس کانفرنس سے پی ٹی آئی کے ضلعی جنرل سیکرٹری سعیدخان،زاہدخان بازخان نے بھی خطاب کیا جبکہ اس موقع پر پی ٹی آئی کے دیگر عہدیداروںاورکارکنوں کی کثیرتعدادبھی موجود تھی۔

مزید : سوات