پارلیمنٹ کا مشترکہ اجلاس، متحدہ اور پی ٹی آئی ارکان میں ہاتھا پائی ہوتے ہوتے رہ گئی

پارلیمنٹ کا مشترکہ اجلاس، متحدہ اور پی ٹی آئی ارکان میں ہاتھا پائی ہوتے ہوتے ...

اسلام آباد (آئی این پی) پارلیمنٹ کے مشترکہ اجلاس میں ایم کیو ایم کے واک آؤٹ کے دوران ایم کیو ایم اور پی ٹی آئی ارکان کے درمیان ہاتھا پائی ہوتے ہوتے رہ گئی، وزیر امور کشمیر برجیس طاہر اور ووفاقی وزیر منصوبہ بندی وترقی احسن اقبال نے ارکان کو آپس میں گتھم گتھا ہونے سے بچایا اور ایم کیو ایم اور پی ٹی آئی ارکان کے درمیان سیز فائر کرا کر ایم کیو ایم کے ارکان کو اپوزیشن لابی کی طرف لے گئے۔ پیر کو جب ایم کیو ایم کے ارکان سپیکر کی جانب سے پی ٹی آئی ارکان کے استعفے منظور نہ کرنے بارے رولنگ کے خلاف احتجاجاً واک آؤٹ کرنے لگے تو راستے میں ایم کیو ایم اور پی ٹی آئی کے ارکان آپس میں الجھ گئے اور ایک دوسرے کے خلاف نعرے بازی کرنے لگے، پی ٹی آئی کے محمد علی اختر اور رائے منصب نے ایم کیو ایم کی جانب سے نعرے بازی کا ظالمو جواب دو خون کا حساب دو، بھتہ خور، ٹارگٹ کلرز کے نعرے لگائے، ۔ اس موقع پر دونوں اطراف کے ممبران کے درمیان ہاتھا پائی اور گتھم گتھا کے خدشات پیدا ہو گئے۔ ایم کیو ایم کے ارکان نے پی ٹی آئی ارکان کے سامنے کھڑے ہو کر نعرے لگانا شروع کر دیئے۔ اس موقع پر برجیس طاہر اور احسن اقبال دیگر ارکان کے ہمراہ دونوں طرف کے ارکان کے درمیان پہنچ گئے اور سیز فائر کرایا۔

مزید : صفحہ اول