حرمین شریفین کے تحفظ کیلئے کسی قربانی سے دریغ نہیں کریں گے ، سمیع الحق

حرمین شریفین کے تحفظ کیلئے کسی قربانی سے دریغ نہیں کریں گے ، سمیع الحق

 اسلام آباد ( آئی این پی)جمعیت علماء اسلام (س)کے سربراہ مولاناسمیع الحق نے کہاہے کہ حرمین شریفین مرکزاسلام ہے ،اس کے تحفظ کیلئے کسی قربانی سے دریغ نہیں کریں گے، مدارس امن وسلامتی کے علمبرداراور اسلامی علوم کی اشاعت کے مراکز ہیں ان اداروں کاکام خالص تعلیمی ہے ذرائع ابلاغ میں انکاذکرمنفی سرگرمیوں کے ساتھ کرناانکی تعلیمی خدمات نہ تسلیم کرنے کے مترادف ہے گزشتہ دودہائیوں میں ہرآنے والی حکومت نے مدارس کی سرگرمیوں کوچیک کرنے کے لئے قانون نافذ کرنے والے اداروں سے ہرقسم کی چیکنگ کے بعد بھی مدارس پر کسی قسم کاالزام ثابت نہ ہوسکامدارس کا کسی قسم کی منفی سرگرمیوں سے کبھی تعلق نہیں رہا حرمین شریفین مرکزاسلام ہے کے تحفظ کیلئے کسی قربانی سے دریغ نہیں کریں گے ۔ وہ پیر کو دارالعلوم زکریا ترنول کے سالانہ دروزہ روحانی اجتماع وتقریب ختم بخاری شریف کے شرکاء سے خطاب کر رہے تھے ۔اجتماع سے حرم شریف کے مدرس مولاناعبدالحفیظ مکی ،مدرسہ مظاہر العلوم سہارنپور انڈیا کے مدیر مولانامحمدطلحہ کاندھلوی،وفاق المدارس العربیہ پاکستان کے ڈپٹی سیکرٹری جنرل مولاناقاضی عبدالرشید ،عالمی اتحاد اہلسنت والجماعت کے امیر مولاناالیاس گھمن،مولاناپیر عزیز الرحمن ہزاروی ،مفتی مختارالدین شاہ ودیگر نے بھی خطاب کیااس موقع پر دارالعلوم زکریا کے مختلف شعبہ جات سے تعلیم مکمل کرنے والے 170طلبہ کی دستاربندی بھی کی گئی اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے علماء کرام نے کہاکہ عالم کفرجانتاہے کہ مسلمان متحد ہوگئے توان کامقابلہ ہمارے بس کی بات نہیں وہ ہمیشہ سے مسلمانوں کی صفوں میں اختلافات کوہوادے کران کے وسائل پر قبضہ کرنے کیلئے کوشاں رہاہے اور وہ آج بھی اسی پالیسی پر عمل پیرا ہوکرمشرق وسطیٰ میں بدامنی کوہوادے رہاہے مسلمانوں کی تاریخ گواہ ہے وہ غیروں سے بڑھ کرانھیں باہمی اختلاف وانتشار نے تباہ کیامدارس کے نوفضلاء کے کندھوں پر امت مسلمہ کے دینی معاملات کی بھاری ذمہ داری عائد ہوئی ہے وہ میدان عمل میں تقویٰ اخلاس للٰہیت اور دلائل کے زیور سے آراستہ ہوکر قدم رکھیں کامیابی وکامرانی ہمارے قدم چومے گی انھوں نے کہاکہ مدارس سے تعلیم مکمل کرنے والے دینی شعبوں میں کام کوترجیح دیں تبلیغ میں وقت لگائیں علماء کرام تقویٰ اور علم کے زیور سے آراستہ ہوکر عوام الناس میں لادینیت،لبرل ازم ،بے حیائی ،فحاشی ،سود ،بددیانتی ودیگر مہلک روحانی بیماریوں اور فتنوں کے خلاف دعوتی بنیادوں پر کام کریں اجتماع کے دوسرے روز بھی ملک بھر سے مولاناپیر عزیز الرحمن ہزاروی کے مریدین خلفاء عوام الناس سے کثیر تعدادمیں شرکت کی اس دوران محفل ذکر ،محفل درود شریف کااہتما م کرکے ملکی سلامتی کے خصوصی دعائیں بھی کی گئیں سمیع الحق

مزید : صفحہ آخر