شیطان کا روپ دھار کر بچوں کے اوپر سے چھلانگ لگانے کی روایت

شیطان کا روپ دھار کر بچوں کے اوپر سے چھلانگ لگانے کی روایت
 شیطان کا روپ دھار کر بچوں کے اوپر سے چھلانگ لگانے کی روایت

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

 بارسلونا (نیوز ڈیسک) عام طور پر سمجھا جاتا ہے کہ توہم پرستی پر مبنی فرسودہ رسومات کا سلسلہ صرف ترقی پذیر ممالک تک ہی محدود ہے لیکن حقیقت تو یہ ہے کہ ترقی یافتہ ممالک میں بھی کئی ایسی رسمیں منائی جاتی ہیں جن کے بارے میں سوچ کر ہی انسان حیران پریشان ہوجاتا ہے۔ سپین میں منائی جانے والی رسم ’بے بی جمپنگ‘ بھی ایسی ہی روایت ہے۔ اسے ہسپانوی زبان میں ’شیطان کی چھلانگ‘ بھی کہا جاتا ہے۔ اس میلے کے دوران گشتہ برس کے دوران پیدا ہونے والے بچوں کو زمین پر لٹایا جاتا ہے اور شیطان کا روپ دھارے ایک آدمی ان کے اوپر سے چھلانگ لگاتا ہے۔ تاریخ کی کتابوں کے مطابق اس میلے کا انعقاد 1620ء4 میں شروع ہوا تاہم اس کی وجہ کیا بنی اس حوالے سے معلومات دستیاب نہین۔ یہ تہوار منانے والے عیسائیوں کا ماننا ہے کہ اس کے ذریعے بچوں کو زندگی میں کوشحالی کا راستہ ملتا ہے اور بدروحوں سے حفاظت بھی۔ شیطان کا روپ

مزید : صفحہ آخر