پروٹیکشن ایکٹ کے تحت گرفتار 2 بھائیوں کے کیس تفتیشی افسر طلب

پروٹیکشن ایکٹ کے تحت گرفتار 2 بھائیوں کے کیس تفتیشی افسر طلب

پشاور(نیوزرپورٹر)پشاورہائی کورٹ کے جسٹس نثارحسین او رجسٹس سید افسرشاہ پرمشتمل دورکنی بنچ نے 15ماہ قبل پاکستان پروٹیکشن ایکٹ کے تحت گرفتار 2بھائیوں کی رہائی سے متعلق دائررٹ پرآج جمعرات کے روز کیس کے تفتیشی افسر کو عدالت طلب کرلیاہے عدالت عالیہ کے فاضل بنچ نے اعجازصابی ایڈوکیٹ کی وساطت سے دائردرخواست گذاروں شیراکبر اورسیدجعفرکی رٹ کی سماعت کی تو اس دوران انہوں نے عدالت کو بتایاکہ درخواست گذاروں کو پندرہ ماہ قبل ہنگوپولیس نے گرفتارکرکے جیل میں بند کردیا اوران کے خلاف پاکستان پروٹیکشن ایکٹ کے تحت مقدمہ درج کیاتاہم15ماہ گذرنے کے باوجود نہ تو کیس کاچالان داخل ہوسکا اورنہ ہی ٹرائل شروع ہوسکاہے پولیس کے مطابق ملزموں کے گھرسے مصنوعی لمبے بال برآمد ہوئے ہیں جو مبینہ طورپر دہشت گردی کے لئے استعمال ہوسکتے ہیں فاضل بنچ نے مقدمے کے تفتیشی افسر کو آج جمعرات کے روز عدالت طلب کرلیاہے ۔

مزید : پشاورصفحہ آخر


loading...