وزیر اعظم نے قوم سے خطاب نہیں مذاق کیا ہے ‘ غلام فرید کوریجہ ‘ ظہور دھریجہ

وزیر اعظم نے قوم سے خطاب نہیں مذاق کیا ہے ‘ غلام فرید کوریجہ ‘ ظہور دھریجہ

ملتان (سٹی رپورٹر) سرائیکی وسیب کے وسائل لاہور پر خرچ کرنا بہت بڑی کرپشن ہے ، آئس لینڈکے وزیر اعظم کی طرح نواز شریف بھی مستعفی ہوں ۔ ان خیالات کااظہار سرائیکستان قومی کونسل کی طرف سے تقسیم سرائیکی اجرک ایوارڈ کی دوسری نشست سے سرائیکی رہنما خواجہ غلام فرید کوریجہ اور ظہور دیجہ (بقیہ نمبر50صفحہ12پر )

نے خطاب کے دوران کیا ۔ تقریب سے میاں عامر شہزاد صدیقی ، ارشد رحمانی ، محمد علی رضوی ، انجم مراد آبادی اور دوسروں نے بھی خطاب کیا ۔ سرائیکی رہنماؤں نے کہا کہ کرپشن کے مسئلے پر وزیراعظم نے قوم سے خطاب نہیں مذاق کیا، پاکستان کو پنجابستان اور لاہور کو گھنٹہ گھر بنا دیا گیا ہے۔ حکمرانوں کی ہر بات لاہور سے شروع ہوتی ہے اور لاہور پر ختم ہوتی ہے۔ عجب بات ہے کہ وزیراعظم سانحہ پشاور پر قوم سے خطاب نہ کیا جبکہ لاہور سانحے پر خطاب کیا ۔ لاہور سرائیکی وسیب کے لوگوں سے دوسرے درجے کا سلوک کرتا ہے جبکہ بھارت سے مودی یا سکھ آئیں تو سرکاری کے علاوہ نجی پروٹوکول بھی دیا جاتا ہے، یہ مذاق بند ہونا چاہئے۔ انہوں نے کہا کہ میر جعفروں اور میر صادقوں کی طرف سے بہاول پور ، ملتان صوبے کے نام پر وسیب کو ایک دوسرے سے لڑانے کی سازش ناکام ہو چکی ہے ۔ وسیب کے تمام لوک تخت لاہور و تخت پشور سے آزادی چاہتے ہیں ۔ ہمارے وسیب کے وسائل اورنج ٹرین پر خرچ ہو رہے ہیں ، بجٹ میں مختص 33فیصد حصہ میں محض 3فیصد خرچ ہوتا ہے بقیہ تمام ر قم لاہور پر خرچ کر دی جاتی ہے ، انہوں نے کہا کہ صوبہ سرائیکستان کے بغیر مسئلے حل نہیں ہو سکتے، بلا تاخیر صوبہ سرائیکستان کا قیام عمل میں لایا جائے کہ ہم خیرات نہیں اپنا حق مانگتے ہیں۔ سرائیکی اجرک ڈے کے موقع پر شمع بناسپتی اور سرائیکستان قومی کونسل کی طرف سے ایوارڈ تقسیم کئے گئے ۔ مخدوم جاوید ہاشمی ، پروفیسر شوکت مغل ، نفیس انصاری اور خواجہ غلام فرید کوریجہ نے ایوارڈ تقسیم کئے ۔ سرائیکی شاعر یاسر رنگ پوری ، ہوشو شیدی ، واقف ملتانی ، کاشف بھٹہ ، ریاض ارم ، جاوید شانی نے انقلابی کلام سنایا جبکہ ریڈیو ، ٹیلی ویژن سنگر صوبیہ ملک اور نسیم سیمی نے سرائیکی گیت سنائے ۔ تقریب میں فادریونس عالم ، شکیل ابن امید ملتانی ، میاں عامر محمود نقشبندی ، فلم ڈائریکٹر اشرف بھٹی ، علی رضوان فلم آرٹسٹ ، ایم کیو ایم کے رہنما سید غلام علی بخاری ، پروفیسر پرویز قادر ، الطاف خان ، شہباز مڑل ، مسیح اللہ خان جامپوری، پروفیسر مظہر امام، پروفیسر محبوب تابش، پروفیسر سبطین گوپانگ، جانباز جتوئی، باسط بھٹی، معروف آرٹسٹ ارشد سیال ، اعجاز نظامی، ضمیر ہاشمی ، سرائیکی رہنما شریف خان لاشاری ، جام فیض اللہ ، رضوان قلندری ، صغیر احمدانی ، جاوید عنبر ، شبیر شوکت سعیدی اور دوسروں نے شرکت کی۔

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...