سپریم کورٹ :پنجاب کی ماتحت عدلیہ کے ججوں کی معطلی پرسماعت

سپریم کورٹ :پنجاب کی ماتحت عدلیہ کے ججوں کی معطلی پرسماعت

اسلام آباد(صباح نیوز)سپریم کورٹ نے پنجاب کی ماتحت عدلیہ کے ججز کی معطلی کا معاملہ میں معطل ججز کی طرف سے مقدمات ٹرانسفر کرنے کی درخواستیں خارج کر دی جبکہ چیف جسٹس آف پاکستان میاں ثاقب نثار نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا ہے کہ ہماری اعلی عدلیہ کے ججز نا قابل تسخیر قلعے ہیں،ججز اور عدلیہ پر بے اعتمادی برداشت نہیں۔چیف جسٹس میاں ثاقب نثار کی سربراہی میں جسٹس فیصل عرب اور جسٹس سجاد علی شاہ پر مشتمل عدالت عظی کے تین رکنی بینچ نے جمعرات کودرخواستوں کی سماعت کی۔اس دوران چیف جسٹس کا کہنا تھا کہ مقدمات لاہور ہائیکورٹ سے کسی دوسری ہائیکورٹ میں منتقل کرنے کا مطلب ججز پر بے اعتباری کے مترادف ہیں ان کا کہنا تھا کہ صدر سپریم کورٹ بار کا ایسے مقدمہ میں پیش ہونا حیران کن ہے۔دوران سماعت بے جا مداخلت پرچیف جسٹس نیمعطل ججز پر اظہار برہمی کرتے ہوئے کہا کہ آپکے وکیل موجود ہیں، وہ ہی بات کریں،آپ اپنا کام چھوڑ کر یہاں آگئے۔چیججز کے وکیل رشید رضوی نے کہاکہ درخواست گذارججز معطل ہیں۔عدالت نے معطل ججز خادم حسین اور شاہد کھچی کی درخواستیں خارج کر دیں اور لاہور ہائیکورٹ کو معطل ججز کی درخواستوں پر جلد فیصلہ کرنے کی ہدایت کردی۔

ججز معطلی سماعت

مزید : علاقائی


loading...