اراکین اسمبلی کے’’احکامات‘‘نہ ماننے کی سزا،35افسران تعلیم کے تبادلوں کا فیصلہ

اراکین اسمبلی کے’’احکامات‘‘نہ ماننے کی سزا،35افسران تعلیم کے تبادلوں کا ...

ملتان (سٹاف رپورٹر )حکومت پنجاب نے ارکان اسمبلی سمیت حکمران جماعت سے تعلق رکھنے والے سیاستدانوں کے ’’احکامات‘‘ پر عمل نہ کرنے والے صوبے بھر کے چیف ایگزیکٹو آفیسرزایجوکیشن سمیت 35افسران تعلیم (بقیہ نمبر17صفحہ12پر )

کے دوسر ے اضلاع میں تبادلوں کا فیصلہ کرلیا ‘ بتایا گیا ہے کہ حکو مت پنجاب نے ارکان اسمبلی کو خوش کرنے کے لئے صوبے بھر کے مختلف چیف ایگزیکو آفیسرز ایجوکیشن سمیت 35افسران تعلیم کے دوسرے اضلاع میں تبادلوں کا فیصلہ کیا ہے ‘ ایسا الیکشن 2018کے سلسلے میں حکمران جماعت سے تعلق رکھنے والے سیاستدانوں اور ارکان اسمبلی کو راضی کرنا ہے جنہوں نے گلہ کیاہے کہ انہوں نے ووٹروں کو راضی کرنے کیلئے ان کے کام کرنا ہوتے ہیں مگربعض ضدی افسران جن پر دیانتداری اور میرٹ کا بھوت سوار ہے وہ کام کرنے سے انکار کردیتے ہیں جس کے باعث ووٹر ناراض ہو رہے ہیں ‘ معلوم ہوا ہے کہ اس سلسلے میں 35افسران تعلیم کے تبادلوں کی لسٹ تیار ہے ‘ اس سلسلے میں وزیر اعلیٰ پنجاب کی منظوری کا انتظار کیا جا رہا ہے ۔

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...