تنگی ،مزدور کسان پارٹی کا قبرستان کیلئے زمین فراہم نہ کرنے کیخلاف احتجاج

تنگی ،مزدور کسان پارٹی کا قبرستان کیلئے زمین فراہم نہ کرنے کیخلاف احتجاج

تنگی(نمائندہ پاکستان)تنگی کے علاقے مندنی میں پاکستان مزدور کسان پارٹی کے زیر اہتمام قبرستان کے لئے زمین فراہم نہ کرنے کیخلاف ایک احتجاجی تقریب کا زیر صدارت بخت محمد منعقد ہوا جسمیں پاکستان مزدور کسان پارٹی کے کارکنان سمیت اہل علاقہ نے کثیر تعداد میں شرکت کی ۔تقریب سے خطاب کرتے ہوئے پاکستان مزدور کسان پارٹی کے مرکزی سینئر نائب صدر شماس خان ،صوبائی صدر ممتاز سالار ،شمالی ہشتنغر کے صدر غلام رحمن اور تاجر اتحاد چارسدہ کے پریس سیکرٹری امداد اللہ کا کہنا تھا کہ علاقے میں موجودہ قبرستان قبروں سے بھر گئی ہے اور مزید میتوں کے دفنانے کیلئے کوئی جگہ باقی نہیں رہی جبکہ دوسری جانب علاقے میں بارہ سو ایکٹر پر محیط سرکاری زمین دستیاب ہے لیکن اس سے صرف دس جرب زمین قبرستان کیلئے نہیں دے رہی ہے ۔انہوں نے کہا کہ عوام کو بنیادی سہولیات فراہم کرنا ریاست کی زمہ داری ہوتی ہے لیکن ستم ظریفی یہ ہے حکومت ہمارے پیاروں کے میتوں کے دفنانے کیلئے زمین فراہم کرنے کیلئے تیار نہیں ۔مقررین کا مزید کہنا تھا کہ علاقے میں جانوروں کے فارم کیلئے 12سو ایکڑ زمین تو دیا گیا لیکن انسانوں کے قبرستان کیلئے 10جرب زمین نہیں دے سکتی ۔انہوں نے صوبائی حکومت سے قبرستان کیلئے زمین فراہم کرنے کیلئے تین مہینے کیلئے ڈیڈ لائن دیتے ہوئے خبردار کیا کہ اگر انہیں زمین فراہم نہیں کی گئی تو سرکاری زمین پر قابض ہونے پر مجبور ہونگے جس کی تمام تر زمہ دار صوبائی حکومت پر ہوگی ۔دریں اثنا ء اہل علاقہ نے ایک احتجاجی واک کا بھی اہتمام کیا جسمیں اپنے مطالبات کے حق میں اور صوبائی حکومت کیخلاف نعربازی کی گئی ۔

مزید : پشاورصفحہ آخر


loading...