کراچی میں میں امن کا سہرا راحیل شریف نہیں، سو فیصد نواز شریف کے سر ہے: گورنر سندھ, انسداد دہشتگردی کریڈٹ سابق آرمی چیف کو جاتا ہے: عمران

کراچی میں میں امن کا سہرا راحیل شریف نہیں، سو فیصد نواز شریف کے سر ہے: گورنر ...

کراچی (مانیٹرنگ ڈیسک) گورنر سندھ نے کہا ہے کہ کراچی میں امن کا سہرا راحیل شریف نہیں، سو فیصدنواز شریف کے سر ہے لیکن ایسا تاثر پیدا کیا جا رہا ہے جیسے کراچی میں امن لانے کا خواب راحیل شریف نے دیکھا ہو۔ کراچی میں بزنس سمٹ سے خطاب کے دوران گورنر سندھ محمد زبیر نے کہا ہے کہ کراچی آپریشن کا کریڈٹ سو فیصد نواز شریف کو جاتا ہے۔ گورنر سندھ نے کہا کہ راحیل شریف ایک عام انسان اور ایک عام جنرل تھے مگر آج کل ایسا تاثر پیدا کیا جا رہا ہے جیسے کراچی میں امن ان کی کوششوں کی وجہ سے آیا ہو۔ گورنر سندھ محمد زبیرنے کہا ہے کہ کراچی میں رینجرز معاشی بہتری تک موجود رہے گی کیونکہ معاشی ترقی کیلئے رینجرز کی تعیناتی ضروری ہے۔انہوں نے کہا کہ نائن زیرو پر تالے لگے ہیں اور کوئی بھی ان کو کھلوانے کا مطالبہ نہیں کر رہا،انہوں نے کہا کہ بانی ایم کیو ایم اب تاریخ کا حصہ ہیں جبکہ ایم کیو ایم لندن کا نام لینے والا کوئی نہیں۔انہوں نے کہا کہ سب پاناما کیس کے فیصلہ کے منتظر ہیں ،فیصلہ جلد آجانا چاہیے کیونکہ فیصلے میں تاخیر کی وجہ سے سٹاک ایکسچینج بھی متاثر ہو رہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ کراچی میں دنیا بدل چکی ہے،تمام سیاسی جماعتیں مل کر بھی کراچی کو اب بند نہیں کر سکتیں۔انہوں نے کہا کہ بانی ایم کیو ایم نے2004 میں دلی کی جو بات کی تھی وہ 2013 سے زیادہ خطرناک ہے۔دلی میں خطاب کا ایک علامتی پہلو ہے جس میں انہوں نے تقسیم پر معافی معانگی تھی اوربانی ایم کیو ایم اس وقت جنرل پرویز مشرف کے اتحادی تھے۔

گورنر سندھ

اسلام آباد (آن لائن) چیئر مین تحریک انصاف عمران خان نے کہا ہے دہشتگردی کیخلاف کامیابیوں کا کریڈٹ راحیل شریف کو جاتا ہے ،نواز شریف کو نہیں ، گورنر سندھ کا نواز شریف کو کریڈٹ دینا افسوسناک ہے۔ محمد زبیر کو پانامہ کیس میں نواز شریف کا دفاع کرنے پر گورنر شپ ملی ہے۔ آرمی چیف سے ملاقات میں افغان بارڈر پر بات چیت کی گئی۔ عدلیہ کا معیار نواز لیگ اور باقی سیاسی جماعتوں کیلئے مختلف ہے، پانامہ کیس کا جو فیصلہ آئے قبول کریں گے،ن لیگ نے سپریم کورٹ کا فیصلہ قبول نہ کیا تو اسے چھپنے کی جگہ نہیں ملے گی، عدلیہ پر حملوں کا دور گزر چکا ہے۔ گزشتہ روز نجی ٹی وی کو انٹرویو دیتے ہوئے انکا مزید کہنا تھا گورنر سندھ ہر قسم کا کریڈٹ نواز شریف کو دینا چاہتے ہیں حالانکہ راحیل شریف نے جو کام کئے وہ حقیقت ہیں جن سے دہشتگردی کم ،ملکی حالات بہتر ہوئے ۔ سندھ ، بلوچستان اور کے پی کے میں دہشتگردی کیخلاف کارروائیاں ہو رہی ہیں، پنجاب میں کیوں نہیں ہوتیں سب کو معلوم ہے پنجاب میں مسلح گروپس موجود ہیں۔ نواز شریف پانامہ کیس کی وجہ سے پریشان ہیں۔ پانامہ سے توجہ ہٹانے کیلئے ہر قسم کا کریڈٹ نواز شریف خود لینا چاہتے ہیں۔ نواز شریف اور شہباز شریف نے اپنی ذات کیلئے 30ارب روپے اشتہاروں پر لگا دیئے حالانکہ یہی رقم صحت و تعلیم پر خرچ کی جانی چاہیے تھی ، ہم نے پشاور میں 4ارب سے شوکت خانم ہسپتال بنایا ہے ،شریف برادران نے سب اداروں کو قابو میں کر لیا ہے ۔ فوج اور عدلیہ سے ان کو خطر ہ ہے، اسلئے فوج کو بدنام کر رہے ہیں۔آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ سے چھپ کر ملاقات نہیں کی۔ میں ایک سیاسی جماعت کا سربراہ ہوں، میری جماعت کی ایک صوبے میں حکومت ہے۔ ہمارے صوبے میں پاک افغان بارڈر بند تھا جس کی وجہ سے روزانہ اربوں کا نقصان ہو رہا تھا۔ آرمی چیف سے ملاقات میں افغان بارڈر کھولنے کی درخواست کی ۔

مزید : ملتان صفحہ اول


loading...