شامی فوج پر امریکی فضائی حملے غیر قانونی اور روس کیساتھ تعلقات کو نقصان پہنچانے کی کوشش ہیں : روسی صدر

شامی فوج پر امریکی فضائی حملے غیر قانونی اور روس کیساتھ تعلقات کو نقصان ...
شامی فوج پر امریکی فضائی حملے غیر قانونی اور روس کیساتھ تعلقات کو نقصان پہنچانے کی کوشش ہیں : روسی صدر

  


ماسکو (ڈیلی پاکستان آن لائن )روسی صدر ولادی میر پیوٹن نے شام پر امریکی میزائل حملوں کو غیر قانونی قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ ان حملوں سے امریکا اور روس کے تعلقات بری طرح متاثر ہو سکتے ہیں۔

”انڈیپنڈنٹ “ کے مطابق روسی صدر نے شامی ایئر بیس پر امریکی میزائل حملوں کی مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ امریکا نے حملہ کر کے بین الاقوامی قوانین کو پامال کیا اور امریکا روس کے تعلقات کو بھی بری طرح نقصان پہنچانے کی کوشش کی ۔

”اس دن کو آج بھی نہیں بھول پاتی جب عامر خان کی وجہ سے میری انا کو ٹھیس پہنچی“: ودیا بالن نے اہم راز سے پردہ اٹھادیا

ترجمان ڈمٹری پیسکو نے اپنے بیان میں کہا کہ شامی صد ر بشار الاسد کے مضبوط اتحادی ولادی میر پیوٹن نے امریکی صدر ٹرمپ کے اس اقدام کو خود مختار ریاست کیخلاف ”جارحیت “قرار دیتے ہوئے کہا کہ یہ عمل عراق میں لوگوں کی اموات سے دنیا کی توجہ ہٹانے کی ایک ناکام کوشش ہے ۔

ڈونلڈ ٹرمپ کی وارننگ کے بعد امریکا کا شامی ایئر بیس پر میزائلوں سے حملہ 

پیسکو کا کہنا تھا کہ روسی صدر نے اپنے بیان میں کہا کہ خود مختار ریاست کیخلاف امریکی میزائل حملے بین الاقوامی قوانین کی کھلی خلاف ورزی ہیں اور اس اقدام سے امریکا اور روس کے تعلقات کو شدید نقصان پہنچے گا ۔”روس کو یقین نہیں کہ شام کے پاس کیمیائی ہتھیار موجود ہیں لہذٰا اس قسم کے فضائی حملے لامحالہ طور پر دہشتگردی کیخلاف جنگ میں بین الاقوامی اتحاد کے قیام میں بڑی رکاوٹ پیدا ہونگے “۔روسی وزیر دفاع کا کہنا تھا کہ روس امریکا سے فضائی حملوں پر وضاحت کا مطالبہ کریگا ۔

مزید : بین الاقوامی


loading...