سیشن جج لاہور نے مقدمات کی نوعیت کے اعتبار سے الگ الگ جج مقرر کردیئے

سیشن جج لاہور نے مقدمات کی نوعیت کے اعتبار سے الگ الگ جج مقرر کردیئے
سیشن جج لاہور نے مقدمات کی نوعیت کے اعتبار سے الگ الگ جج مقرر کردیئے

  


لاہور(نامہ نگار ) ڈسٹرکٹ اینڈسیشن جج عابدحسین قریشی نے سائلین اوروکلاءکی سہولت کے لئے سیشن اور سول کورٹ میں کیسوں کی نوعیت کے حوالے سے ججز کوسماعت کے لئے مقررکردیاہے۔

نرسوں کی جانب سے مردہ قرار دیا گیا بچہ، تدفین سے چند لمحے قبل زندہ ہوگیا

سیشن جج نے جن کیسوں کی سماعت کے لئے ججزمقرر کئے ہیں،ان میں قتل کے مقدمات کی سماعت کے لئے 12، منشیات کے لئے 4 ،اندراج مقدمے کی سماعت کے لئے7، سوئی گیس کے کیسوں کے لئے 4،سول کیسوں کی اپیلوں کے لئے 13،گارڈین کے لئے 7، رینٹ کے 6 اور فیملی کیسوں کی سماعت کے لئے 19جج شامل ہیں جبکہ سول کیسوں کے لئے 18جج مقرر کئے گئے ہیں۔

واضح رہے کہ سیشن کورٹ میں 20ہزار 237جبکہ مجسٹریٹس اور سول کورٹ میں 1لاکھ 51ہزار 488کیسز التوا کاشکار ہیں۔سیشن جج نے کیسز کو جلد سے جلد نمٹانے کے احکامات جاری کردئیے ہیں،سیشن کورٹ میں کیسوں کی تعداد میں اضافے کے پیش نظر مختلف نوعیت کے کیسوں کی سماعت کے لئے ججوں کو مخصوص کیاگیاہے، ججز کو مخصوص کرنے کا مقصد سا ئلین اوروکلاءکو سہولت فراہم کرناہے تاکہ انہیں متعلقہ جج تلاش کرنے میں مشکلات کاسامنا نہ کرناپڑے۔

مزید : لاہور


loading...