کرونا پر قابو پانے کیلئے چینی ماہرین کے تجربات سے سیکھنا ہو گا،الفرید ظفر

کرونا پر قابو پانے کیلئے چینی ماہرین کے تجربات سے سیکھنا ہو گا،الفرید ظفر

  

لاہور(جنرل رپورٹر) کورونا جیسے خطرناک وائرس پر مختصر عرصے میں قابو پانے کے لئے وبائی امراض کے چینی ماہرین اور ڈاکٹروں کے تجربات،گائیڈ لائنز اور پیشہ وارانہ مہارت کو مد نظررکھتے ہوئے احتیاطی تدابیر پر عملدرآمد سے ہی پا کستان بھی اس وبائی مرض کو شکست دینے کی کوششوں میں کامیاب ہوگا اور ہمیں اس سلسلے میں ہر مساعی کو برؤئے کار لانا ہوگا اس امر کا اظہارپرنسپل لاہور جنرل ہسپتال پروفیسر ڈاکٹرسردار محمد الفرید ظفر نے میڈیا کے نمائندوں سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔انہوں نے کہا کہ وزیر اعظم عمران خان کی پالیسی کے مطابق محکمہ صحت پنجاب تیزی کے ساتھ اس منزل کی طرف رواں دواں ہے اور چینی ڈاکٹرز نے بر وقت سہولیات و علاج معالجہ پر اظہار اطمینان کیا ہے۔پروفیسر الفرید ظفر نے کہا کہ کورونا وائرس کے خلاف موثر ترین ہتھیار سماجی دوری ہے اور مشکل حالات میں ایک دوسرے سے مصافحہ سے پرہیز اور بلا ضرورت گھر سے باہر نہ نکلنا ہی وقت کی اہم ترین ضرورت ہے جس کا ایک ذمہ دار شہری ہونے کے ناطے ہر شخص کو احساس کرنا چاہیے۔انہوں نے کہا کہ بحیثیت مسلمان صفائی ہمارا نصف ایمان ہے اور کورونا وائرس سمیت دیگر بیماریوں اور جراثیم سے محفوظ رہنے کے لئے بھی صفائی ستھرائی لازمی ہے۔

پروفیسر الفرید ظفر نے کہا کہ کوروناوائرس ایک نیا وائرس ہے اسی وجہ سے ابھی تک کوئی ویکسین دریافت نہیں ہوئی لہذا" پرہیز علاج سے بہتر ہے" کے اصول پر عملدرآمد کو یقینی بنائیں تاکہ اس خطرناک وائرس سے محفوظ رہ سکیں۔انہوں نے کہا کہ ہر شخص کو دبائی مرض کی روک تھام کے لئے میڈیا، سول سوسائٹی اور معاشرے کو بھی اپنا کردار ادا کرنا چاہیے اور پوری قوم کو اس مسئلہ کی سنگینی کو سمجھتے ہوئے سنجیدگی کا مظاہرہ کرنا چاہیے۔پرنسپل الفرید ظفر کا کہنا تھا کہ چین کی عوام نے احتیاطی تدابیر کو اپناتے ہوئے اس وائرس کو شکست دی ہمیں بھی اس کے خلاف جنگ جیتنے کے لئے حکومتی ہدایات پر عمل کرنا ہے اور کسی قسم کی کوتاہی نہیں برتنی۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -