خواجہ سراﺅں کے ساتھ مردوں کی شادی، مفتی عبدالقوی کے نئے بیان نے نیا تنازعہ کھڑا کردیا

خواجہ سراﺅں کے ساتھ مردوں کی شادی، مفتی عبدالقوی کے نئے بیان نے نیا تنازعہ ...
خواجہ سراﺅں کے ساتھ مردوں کی شادی، مفتی عبدالقوی کے نئے بیان نے نیا تنازعہ کھڑا کردیا

  

لاہور(مانیٹرنگ ڈیسک) مفتی عبدالقوی اپنے متنازعہ بیانات کی وجہ سے آئے روز لوگوں کی توجہ کا مرکز بنے رہتے ہیں۔ اب انہوں نے خواجہ سراﺅں کے ساتھ شادی سے متعلق ایسا بیان داغ دیا ہے کہ سوشل میڈیا پر ہنگامہ برپا ہو گیا۔

ڈیلی پاکستان گلوبل کے مطابق ایک نجی ٹی وی چینل سے گفتگو کرتے ہوئے مفتی عبدالقوی نے خواجہ سراﺅں کو نصیحت کرڈالی کہ انہیں بھی شادی کرنی چاہیے۔ ان کا کہنا تھا کہ خواجہ سراﺅں میں اگر مرد یا عورت کی خصوصیات موجود ہیں تو وہ بھی جسمانی اعتبار سے نارمل انسانوں کی طرح شادی کر سکتے ہیں۔ 

رپورٹ کے مطابق عبدالقوی کے ایسے ہی بیانات اور غیراخلاقی سرگرمیوں کی وجہ سے ان سے رواں سال کے آغاز میں مفتی کا لقب واپس لیا جا چکا ہے۔ ان کے خواجہ سراﺅں کی شادی سے متعلق ا س بیان پر حافظ مشتاق احمد نعیمی نامی وکیل نے ان کے خلاف قانونی کارروائی کے لیے عدالت سے رجوع کر لیا ہے۔ اپنے اس بیان کی وجہ سے کڑی تنقید کا نشانہ بننے کے بعد بھی عبدالقوی نے روحی ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ ”میں نے خواجہ سراﺅں کی شادی کی متعلق جو کچھ کہا، اس کا ذکر قرآن مجید میں ہے۔ اگر میں نے کچھ غلط کہا ہے تو میں اس پر معافی مانگنے کے لیے تیار ہوں۔اس بیان کی بنیاد پر میرے خلاف مقدمہ قائم نہیں ہو سکتا۔“

مزید :

علاقائی -پنجاب -لاہور -