خاتون وزیرکااستعفیٰ مسلم حکمرانوں کے منہ پرطمانچہ ہے، ناصراقبال خان

خاتون وزیرکااستعفیٰ مسلم حکمرانوں کے منہ پرطمانچہ ہے، ناصراقبال خان

  

لاہور(پ ر) ہیومن رائٹس موومنٹ کے مرکزی صدرمحمدناصراقبال خان ،سیکرٹری جنرل محمدرضا ایڈووکیٹ، سینئر نائب صدرفاروق چوہان،صدرمدینہ منورہ سرفراز خان نیازی ،صدرکراچی یونس میمن، صدر پنجاب محمدیونس ملک ،نائب صد ر عزت رسول ایڈووکیٹ ، صدرفیصل آبادندیم مصطفی ،صداوکاڑہ سیّداعجازگیلانی ، صدر شیخوپورہ عمران حیدر،صدرمنڈی بہاﺅالدین مرزا خالد محمود، اورنائب صدرلاہورمہران اجمل خان نے کہا ہے کہ خاتون وزیرکااستعفیٰ مسلم حکمرانوں کے منہ پرطمانچہ ہے۔باضمیرسعیدہ وارثی نے غیرت ایمانی اورجذبہ انسانی کے تحت وزارت کوٹھوکر مارتے ہوئے برطانوی وزیراعظم کاضمیر جھنجوڑامگرمسلمان حکمرانوں کے ضمیر مردہ ہوچکے ہیں جومعصوم فلسطینیوں کی آہ وفریاد کے باوجودبیدار نہیں ہو رہے انسان کاوقار منصب یااقتدارنہیں بلکہ اس کے کردار کامرہون منت ہوتا ہے،وہ ایک اجلا س سے خطاب کررہے تھے محمدناصراقبال خان نے مزیدکہا کہ مسلمان حکمرانوں کی پست ہمتی درحقیقت اقتدارپرستی کاشاخسانہ ہے اسرائیل نے بتادیا وہ اقوام متحدہ اوراوآئی سی کوجوتے کی نوک پرلکھتا ہے ۔انہوں نے کہا کہ اگرعالمی ضمیر میں دم ہے توشیطان اسرائیل کامحاسبہ کرے شیطان اسرائیل کاناپاک اورناجائزوجودملیامیٹ کرنے کیلئے اسلامی ملک اپنے اپنے فوجی کیوں نہیں بھجواتے ۔

 اگرآزادی مارچ روکنے کیلئے اسلام آبادمیں فوج طلب کی جاسکتی ہے توغزہ کیوں نہیں بھجوائی جاسکتی ۔انہوں نے کہا کہ اگراسلامی ملکوں کے بزدل حکمران کچھ نہیں کرسکتے تواقوام متحدہ کیلئے اپنے اپنے مندوبین کوواپس آنے کاحکم دیں ۔غزہ میں مسلسل کئی روزشیطان اسرائیل کی بدترین بربریت اورامریکہ کی طرف سے اپنے وفادار اسرائیل کی بھرپورحمایت کے بعد اسلامی ملکوں کااقوام متحدہ میں بیٹھنا جائز نہیں

مزید :

میٹروپولیٹن 4 -