حاملہ خاتون دریا میں تیر کر ہسپتال پہنچ گئی

حاملہ خاتون دریا میں تیر کر ہسپتال پہنچ گئی

  

نئی دہلی (مانیٹرنگ ڈیسک) بھارتی ریاست کرناٹک میں 9 ماہ سے حاملہ خاتون دریا میں تیر کر طبی معائنے کرانے کے لیے ہسپتال پہنچ گئی ، یہ تقریباً ایک کلومیٹرکا سفر تھا۔غیرملکی میڈیا رپورٹ کے مطابق دریا میں سیلاب کی سی کیفیت اور طغیانی کے باوجود ریاست کے ضلع یادگیر کے ایک گاو¿ں کی رہائشی یے یووا نے اپنے گھر سے مجموعی طور پر چار کلومیٹر دور ہسپتال پہنچنے کے لیے یہ فاصلہ طے کیا۔خاتون نے بتایاکہ ڈر تو لگا تھا لیکن بچے کا سوال تھا، بھائی بھی ساتھ ہی تیر رہاتھا، اس لیے ہمت سے کام لیتے ہوئے دریا عبور کرنے کا فیصلہ کیا، دریاکا سفر طے کرنے میں ایک گھنٹہ لگ گیا۔رپورٹ کے مطابق عام دنوں میں لوگ لکڑی سے بنے بیڑے کے ذریعے دریا پار کرتے ہیں لیکن دریامیں سیلاب اور 12سے 14فٹ اونچی لہروں کی وجہ سے کوئی بیڑا بھی دستیاب نہیں۔علاقے کی پرائمری ہیلتھ سینٹر کی ڈاکٹر بینا نے برطانوی میڈیا کو بتایاکہ 7 سال سے وہ اِسی علاقے میں تعینات ہیں لیکن کسی بھی حاملہ خاتون کو کبھی ا±نہوں نے دریاپارکرتے نہیں دیکھا۔ا±نہوں نے بتایاکہ خاتون اپنے رشتہ داروں کے پاس رہ رہی ہیں ، 20 سے 25 دن کے اندر اندر ماں بن جائیں گی۔

مزید :

صفحہ آخر -