12 سالہ بچے نے نو سالہ بچے کو قتل کرکے گرفتاری پیش کردی

12 سالہ بچے نے نو سالہ بچے کو قتل کرکے گرفتاری پیش کردی

  

نیویارک (نیوز ڈیسک) امریکہ میں ایک 12 سالہ بچے نے ایک نو سالہ بچے کو خنجر کے وار کرکے قتل کرنے کے بعد خود ہی فون کرکے پولیس کو بلوالیا اور گرفتاری پیش کردی۔ یہ دردناک واقعہ کینٹ وڈ شہر میں پیش آیا، ایک شہری گلین سٹیسی نے بتایا کہ وہ سڑک کے کنارے چل رہا تھا کہ ایک بچہ اس کے پاس آیا جس ے صرف ایک لمبا نیکر پہن رکھا تھا۔ بچے نے سٹیسی سے کہا کہ اسے ایک کال کرنے کیلئے فون کی ضرورت ہے۔ سٹیسی نے بچے کو فون دے دیا مگر اس کی بات چیت سن کر اس پر سکتہ طاری ہوگیا۔ بچے نے ایمرجنسی سروس 911 کو فون کرکے بتایا کہ اس نے ایک دوسرے بچے کو خنجر کے وار کرکے قتل کردیا ہے اور وہ چاہتا ہے کہ پولیس اسے آکر گرفتار کرلے کیونکہ اب وہ اس دنیا میں مزید نہیں رہنا چاہتا۔ بچے نے یہ بھی کہا کہ اسے اپنی زندگی سے نفرت ہے اور یہ کہ کوئی بھی اس سے محبت نہیں کرتا۔ اس نے بتایا کہ اس نے جس لڑکے پر حملہ کیا ہے وہ اس کے بارے میں کچھ نہیں جانتا۔ کچھ دیر بعد جب اس نے پولیس اہلکاروں کو غلط سمت میں جاتے دیکھا تو آواز دے کر انہیں اپنی جانب بلایا۔ پولیس اسے ایمبولینس میں بٹھا کر تھانے لے گئی۔ اس سے پہلے زخمی بچے کو ہسپتال پہنچایا گیا لیکن وہ شدید زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے چل بسا، اس کی شناخت مائیکل کونر کے نام سے کی گئی ہے۔ پولیس کا خیال ہے کہ حملہ کرنے والا بچہ شدید ذہنی مسائل سے دوچار ہے اور اسے نفیساتی مدد کی ضرورت ہوسکتی ہے۔

مزید :

صفحہ آخر -