اسلام آباد کو نام نہادانقلابیوں کے کرم پر نہیں چھوڑاجاسکتا، دھرنادیں یانہ دیں ، مذاکرات سے ہی مسائل کاحل نکلے گا: سعد رفیق

اسلام آباد کو نام نہادانقلابیوں کے کرم پر نہیں چھوڑاجاسکتا، دھرنادیں یانہ ...
اسلام آباد کو نام نہادانقلابیوں کے کرم پر نہیں چھوڑاجاسکتا، دھرنادیں یانہ دیں ، مذاکرات سے ہی مسائل کاحل نکلے گا: سعد رفیق

  

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک)وفاقی وزیر ریلوے خواجہ سعد رفیق نے کہاہے کہ وفاقی دار الحکومت کو نام نہاد انقلابیوں یا فسادیوں کے رحم و کرم پر نہیں چھوڑا جا سکتا،اسلام آباد میں جلسہ کرنے کے لیے پرامن رہنے کی گارنٹی دینا ہوگی،عمران خان دھرنا دیں یا نہ دیں مسائل کا حل مذاکرات سے ہی نکلے گا۔

پارلیمنٹ ہاو¿س کے باہر میڈیا سے بات کرتے ہوئے خواجہ سعد رفیق نے کہا کہ پاکستان دنیا کا ساتواں بڑا ملک اور ایک نیو کلیئر ریاست ہے ، حکومت اور پارلیمنٹ کبھی نہیں چاہے گی کہ اسلام آباد میں گھیراو¿ جلاو¿ کی سیاست ہو اور پوری دنیا میں پاکستان کا مذاق بنے۔ ان کا کہنا تھا کہ عمران خان ایک جمہوری لیڈر ہیں ان کا رویہ بھی جمہوریت کے شایان شان ہونا چاہئے ، عمران خان کے ساتھ مذاکرات کے ذریعے مسائل کا حل نکالنے کے لئے تیار ہیں، جڑواں شہروں میں دھرنادینے سے عوام کی مشکلات بڑھ جائیں گی،کم ازکم عوامی نمائندوں کو لوگوں کی مشکلات کا خیال کرنا چاہئے۔

خواجہ سعد رفیق نے کہا کہ جسے بھی اسلام آباد میں جلسہ کرنا ہے پرامن رہنے کی گارنٹی دینا ہوگی،مشورہ ہے کہ عمران سازشیوں سے ہوشیار رہیں ،ریٹائرڈسیاسی شخصیات انھیں غلط مشورے دے رہے ہیں۔ انھوں نے کہا کہ طاہر القادری عوام کو جلاو¿ گھیراو¿ اور اشتعال انگیزی کی دعوت دے رہے ہیں، پارلیمنٹ میں بھی اُن کی نمائندگی نہیں ، غیرملکی شہری ہیں ، اُن کے ساتھ کوئی رعایت نہیں برتی جاسکتی ، طاہر القادری کے ساتھ بھی ہم نے بات چیت کرنے کی کوشش کی ہے، طاہر القادری اشتعال انگیز بیانات سے گریز کریں۔

مزید :

اسلام آباد -اہم خبریں -