یورپی خلائی جہاز 6 ارب کلو میٹر کا فاصلہ طے کرکے دمدار ستارے تک پہنچ گیا

یورپی خلائی جہاز 6 ارب کلو میٹر کا فاصلہ طے کرکے دمدار ستارے تک پہنچ گیا
یورپی خلائی جہاز 6 ارب کلو میٹر کا فاصلہ طے کرکے دمدار ستارے تک پہنچ گیا
کیپشن: Rosetta

  

لندن (ویب ڈیسک) یورپی خلائی ایجنسی کی جانب سے دم دار ستارے کے تعاوب میں بھیجا جانے والا خلائی جہاز ”روزیٹا“ کامیابی کے ساتھ اپنی منزل کو پہنچ گیا ہے اور اب یہ جہاز دم دار ستارے ”67پی چوریوموف جبراسی مینکو“ کے مدار میں چکر لگارہا ہے۔ منزل تک پہنچنے میں اس خلائی جہاز کو 10 سال 5 مہینے اور 4 دن لگے اور اس نے تقریباً ساڑھے 6 ارب کلو میٹر (چار ارب میل) کا فیصلہ طے کیا اور اس دوران اس نے سورج کے گرد پانچ مرتبہ چکر لگایا۔ دمدار ستارے تک پہنچنے کیلئے روزیٹا نے 6 تھرسٹرفائر کئے (انجن کے ذریعے آگے بڑھنے کیلئے زبردست قوت پیدا کی) یہ دمدار ستارہ، جسے ماہرین نے ربڑ کا ٹکڑا قرار دیا ہے، 55 ہزار کلومیٹر فی گھنٹے کی رفتار سے آگے بڑھ رہا ہے جبکہ روزیٹا نے اس کے 62 کلومیٹر گرد محور بنا کر چکر لگانا شروع کردیا ہے۔

مزید :

سائنس اور ٹیکنالوجی -