بادامی باغ، 15سالہ لڑکی نے گھر والوں سے لڑ کر خود کشی کر لی

بادامی باغ، 15سالہ لڑکی نے گھر والوں سے لڑ کر خود کشی کر لی

لاہور(کر ائم سیل) بادامی باغ کے علاقہ میں 15سالہ لڑکی نے گھر والوں سے لڑ کر خود کشی کر لی ۔پولیس نے لا ش پوسٹ ما رٹم کے بعد ورثا کے حوالے کر دی ۔تفصیلا ت کے مطابق با دامی باغ کے علاقہ سادات کالونی کے رہا ئشی محمد حسین کی بیٹی رابعہ نے گھر والوں سے جھگڑا کرکے گندم میں رکھنے والی زہریلی گو لیاں نگل لیں جس کو فوری طبی امداد کے لیے میو ہسپتال میں لے جا یا گیا جہا ں وہ چند گھنٹے زندگی مو ت کی کشمکش میں مبتلارہنے کے بعد دم توڑ گئی ۔پولیس نے لڑکی کی لاش پوسٹ مارٹم کے بعد ورثاکے حوالے کر دی ۔متوفیہ کے باپ نے ’’پاکستان‘‘سے گفتگو کرتے ہو ئے کہا کہ ابعہ کو رات گئے اچانک پیٹ میں درد ہو ا تھا،اس کو ہسپتال میں لے جا یا گیا جہاں ڈاکٹروں نے بتایا کہ اس نے گندم میں رکھنے والی گو لیاں کھائی ہیں اور اس کے زندہ رہنے کے چانس نہ ہو نے کے برابرہیں ۔ بعدازاں انہوں نے رابعہ کا علاج شروع کردیا لیکن وہ زندگی کی بازی ہار گئی ،ہم پوسٹ مارٹم نہیں کروانا چاہتے تھے لیکن پولیس نے ہمیں ایسا کرنے پر مجبور کیا ہے۔ اس بارے میں ایس پی سٹی ہارون نے بتایاکہ عدالت نے قانونی کا رروائی کے لئے کہا ہے، اس لئے ہم پوسٹ مارٹم کے بغیر لاش ورثا کے حوالے نہیں کر سکتے تھے۔

مزید : علاقائی