باپ نے اپنی 6 سالہ بیٹی کی شادی 55 سالہ بوڑھے سے کروادی، ایسا کیوں اور کس چیز کے بدلے کیا گیا؟ حقیقت جان کر آپ کا دل بھی بھرآئے گا

باپ نے اپنی 6 سالہ بیٹی کی شادی 55 سالہ بوڑھے سے کروادی، ایسا کیوں اور کس چیز کے ...
باپ نے اپنی 6 سالہ بیٹی کی شادی 55 سالہ بوڑھے سے کروادی، ایسا کیوں اور کس چیز کے بدلے کیا گیا؟ حقیقت جان کر آپ کا دل بھی بھرآئے گا

  

کابل (نیوز ڈیسک) اولاد جیسی انمول نعمت کی تمنا ہر کسی کو ہوتی ہے لیکن کچھ لوگ ایسے سفاک اور حیوان صفت ہوتے ہیں کہ انسان بے اختیار پکار اٹھتا ہے کہ کاش یہ درندے اولاد جیسی نعمت سے محروم ہی رہتے۔ افغانستان میں ایک ایسے ہی شقی القلب باپ نے اپنی پانچ سالہ بچی کو محض ایک بکری کے بدلے ایک 55 سالہ شخص کے حوالے کر دیا۔

میل آن لائن کی رپورٹ کے مطابق یہ لرزہ خیز واقعہ صوبہ غورکے علاقہ فیروز کوہ میں پیش آیا۔ رپورٹ کے مطابق لڑکی کے باپ نے عبدالکریم نامی شخص سے ایک بکری وصول کی اور اس کے بدلے اپنی پانچ سالہ بیٹی اس سے بیاہ دی۔ بدبخت باپ نے اپنی پانچ سالہ بچی کے بدلے بکری کے ساتھ چاول ، چینی اور کوکنگ آئل جیسی اشیاءبھی لیں۔

قیامت کی نشانی؟ 42 سالہ خاتون نے اپنی جوان بیٹی کے شوہر سے شادی رچالی، وجہ ایسی کہ جان کر کسی کے بھی پیروں تلے زمین نکل جائے

شرمناک سودے کے بعد عبدالکریم بچی کو فیروز کوہ کے علاقے میں ایک دور کے رشتہ دار کے گھر لے گیا اور اسے بتایا کہ ننھی لڑکی اس کی بیٹی ہے۔ اس رشتہ دار نے میڈیا کو بتایا کہ جب رات کے وقت اتفاقاً اس کی نظر مہمان خانے میں پڑی تو یہ دیکھ کر ساکت رہ گیا کہ عبدالکریم بچی کا لباس اتار رہا تھا۔ یہ صورتحال دیکھ کر رشتہ دار نے عبدالکریم پر لعنت ملامت شروع کر دی، اور تب اس نے بتایا کہ لڑکی اس کی بیوی ہے اور اس کا والد ان دونوں کا نکاح کروا چکا ہے۔ یہ بیہودہ بیان سننے پر رشتہ دار مزید مشتعل ہو گیا اور لوگوں کو اکٹھا کر لیا۔ اس نے مقامی تحفظ خواتین بیورو کو بھی معاملے سے آگاہ کر دیا جس کے بعد پولیس کو بلوالیا گیا ۔ پولیس نے شیطان صفت بڈھے عبدالکریم کو گرفتار کر لیا جبکہ اگلے روز لڑکی کے والد کو بھی گرفتار کر لیا گیا۔

ایک بکری کے بدلے اپنی بیٹی بیچنے والے والد نے شرمناک مﺅقف اختیار کرتے ہوئے بتایا کہ وہ غربت سے بہت تنگ تھا اور اسے اشیاءخورونوش کی فوری ضرورت تھی جس کے باعث مجبور ہو کریہ کام کیا۔ اس کا مزید کہنا تھا کہ لڑکی کو بیاہ دینے سے اس کے گھر میں کھانے والا ایک فرد بھی کم ہو گیا۔ افغان میڈیا کے مطابق دونوں بدبختوں کے خلاف قانونی کارروائی جاری ہے۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -