اوٹاوا،پارسل سے خطرناک سانپ بل کھاتا ہوا باہر نکل آیا

اوٹاوا،پارسل سے خطرناک سانپ بل کھاتا ہوا باہر نکل آیا
اوٹاوا،پارسل سے خطرناک سانپ بل کھاتا ہوا باہر نکل آیا

  

اوٹاوا (نیوز ڈیسک) کینیڈا کے ایک پوسٹ آفس میں کام کرنے والے ملازمین نے کسی پارسل سے آج تک ایسی چیز برآمد ہوتے نہیں دیکھی تھی کہ جو چین سے آنے والے ایک پارسل سے نکل آئی۔ برٹش کولمبیا کے ایک پوسٹ آفس میں تعینات ملازمین اس وقت چیختے ہوئے باہر کی جانب بھاگ کھڑے ہوئے جب ایک پارسل میں سے ایک خطرناک سانپ بل کھاتا ہوا باہر نکل آیا۔ خوفزدہ ملازمین نے فوری طور پر پولیس اور محکمہ وائلڈ لائف کو اطلاع کی۔ پولیس اور محکمہ وائلڈ لائف کے ماہرین موقع پر پہنچے اور مشکوک پارسل کو قبضے میں لے کر اس کی تلاشی شروع کردی۔ پارسل میں سے نکلنے والے سانپ کے بارے میں بتایا گیا کہ یہ انتہائی زہریلا وائپر سانپ تھا جبکہ پارسل کے اندر اسی قسم کے دو مزید سانپ بھی موجود تھے مگر یہ پہلے ہی مرچکے تھے۔ویب سائٹ WWWNکی رپورٹ کے مطابق سانپوں والا پارسل چین سے بھجوایا گیا تھا اور اس کی منزل منیٹوبا شہر تھا۔ سانپ کو پکڑنے والے اہلکاروں کا کہنا تھا کہ وائپر انتہائی زہریلے سانپ ہیں اور کینیڈا میں اس سانپ کے زہر کا تریاق بھی موجود نہیں۔ پولیس نے پکڑے گئے سانپ کو متعلقہ محکمے کے حوالے کرنے کے بعد معاملے کی تحقیقات شروع کردیں۔

مزید :

صفحہ آخر -