چیف سیکرٹری کی زیر صدارت تمام اضلاع کی سہہ ماہی جائزہ کارکردگی اجلاس

چیف سیکرٹری کی زیر صدارت تمام اضلاع کی سہہ ماہی جائزہ کارکردگی اجلاس

  

پشاور( پاکستان نیوز)چیف سیکرٹری خیبر پختونخوا امجدعلی خان نے تمام ڈپٹی کمشنرز کو ہدایت کی ہے کہ وہ نرخوں کی باقاعدگی سے چیکنگ اور ناجائز منافع خوروں پر عائد جرمانہ کی رقم کی وصولی اور سزاکے عمل کو یقینی بنائیں۔ وہ گزشتہ روز سول سیکرٹریٹ پشاور میں اضلاع کی سہہ ماہی کارکردگی جائزہ اجلاس کی صدارت کر رہے تھے ۔چیف سیکرٹری نے میڈیکل سٹور ز کا معائینہ کرنے، ادویات کے نمونوں کا حصول اور غیر رجسٹرد میڈیکل پریکٹیشنرز کے خلاف ایکشن لینے کے بڑھتے ہوئے منفی رحجان کے معاملہ کو سیکرٹری صحت کے ساتھ ایک الگ اجلاس میں اٹھانے کا فیصلہ کیا۔ انہوں نے ناجائز تجاوزات کے خاتمہ میں اضلاع پشاور، ڈیرہ اسماعیل خان، اورچارسدہ کے انتظامیہ اقدامات کو سراہا اور متعلقہ حکام کو ناجائز تجاوزات کے خلاف خصوصی مہم چلانے کی ہدایت کی۔ چیف سیکرٹری نے تمام اضلاع کی انتظامیہ کو ہدایت کی کہ وہ آئندہ 15روز میں ضلع پشاور کی طرز پر رضاکار ٹاسک فورس قائم کریں جو ضلعی حکومتوں کو خصوصی اقدامات کی تعمیل میں معاون و مددگار ثابت ہوگی ۔ چیف سیکرٹری نے ریوینیو آفیسرز کو باقاعدگی کے ساتھ مقررہ مدت کے اندر ریوینیو مقدمات نمٹانے کی بھی ہدایت کی۔چیف سیکرٹری نے صوبائی حکومت کے خصوصی اقدامات کی روشنی میں سپورٹس گالا، فیسٹیولز کے انعقاد پر اضلاع پشاور، مردان، بنوں، بونیر، مالاکنڈ، ہری پور اور چترال کی تعریف کرتے ہوئے باقی اضلاع کو بھی کم از کم ایک ماہ میں دو بار ایسے خصوصی اقدامات اٹھانے کی ہدایت کی۔انہوں نے ضلع مردان کی جانب سے اٹھائے جانے والے ڈومیسائل کی ہوم ڈیلیوری اقدام کو سراہا اور ابتدائی مرحلہ میں اضلاع پشاور، چارسدہ اور نوشہرہ میں مذکورہ ماڈل نافذ کرنے کی ہدایت کی۔ اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ سیٹیزن پورٹال میں شہریوں کے اندراج کی تعداد کو بڑھانے کے لئے پرفارمنس منیجمنٹ ریفارمز یونٹ، خدمات تک رسائی اور معلومات تک رسائی کمیشن کے مشترکہ تعاون سے ایک خصوصی آگاہی مہم شروع کی جائے گی جس کے لئے میڈیا کی مدد لینے کے ساتھ ساتھ مٹلف اداروں کی جانب سے تمثیل نمائی بھی پیش کی جائے گی۔ اجلاس میں تمام ڈویژنل کمشنرز،ڈپٹی کمشنرز اور دیگر متعلقہ اہلکاروں نے بھی شرکت کی۔

مزید :

راولپنڈی صفحہ آخر -