2018ء تک 10 ہزار میگاواٹ سے زائد بجلی نیشنل گریڈ میں شامل ہوجائیگی

2018ء تک 10 ہزار میگاواٹ سے زائد بجلی نیشنل گریڈ میں شامل ہوجائیگی

  

اسلام آباد (این این آئی)حکومت کی جانب سے ملک میں بجلی اورتوانائی کی قلت پر قابو پانے کے منصوبوں کی تکمیل سے مئی اورجون 2018ء تک 10 ہزار میگاواٹ سے زائد بجلی نیشنل گریڈ میں شامل ہوجائیگی جس سے لوڈ شیڈنگ کے اندھیرے چھٹ جائیں گے ۔ ذرائع کے مطابق 2017-18میں پاک چین اقتصادی راہداری کے تحت توانائی کے کئی منصوبے مکمل ہوجائیں گے ۔ ذرائع کے مطابق سی پیک کے علاوہ بھی توانائی کے کئی منصوبوں پر کام جاری ہے اور توقع ہے کہ سال 2020 تک مزید 10ہزار میگاواٹ کے منصوبے مکمل ہوں گے جسے صنعتوں کے استعمال میں لا کر ملک کی معاشی ترقی کو یقینی بنانے کی کوشش کی جائے گی۔رپورٹ کے مطابق پورٹ قاسم پلانٹ منصوبہ کا دوسرا یونٹ جون 2018تک مکمل ہوگا ، اس منصوبہ سے 1320میگاواٹ بجلی حاصل ہوگی۔ تربیلا توسیعی منصوبہ 4 جون 2018میں مکمل ہوگا جس سے 1410میگاواٹ بجلی قومی گرڈ میں شامل ہوگی۔نیلم جہلم منصوبہ اپریل 2018میں مکمل ہوگا جس سے 969میگاواٹ بجلی کی پیدوار قومی گرڈ میں شامل ہوگی ۔اسی طرح پٹ رینڈ ہائیڈرو پراجیکٹ ،گولن گول ہائڈرو پراجیکٹ ، چشمہ نیوکلیئرپاور پلانٹ توسیعی منصوبہ اور قائد اعظم سولر پارک منصوبوں پر بھی کام تیزی سے جاری ہے۔ ان منصوبوں کی تکمیل سے ملک میں وافر مقدار میں بجلی کی فراہمی ممکن ہوسکے گی جس سے لوڈشیڈنگ کے خاتمہ سمیت زرعی اورصنعتی شعبے کیلئے بھی وافر مقدار میں بجلی کی فراہمی ممکن ہوسکے گی۔

مزید :

کامرس -