عمران غلطی تسلیم کرلیں معاف کردونگی ، گلا لئی

عمران غلطی تسلیم کرلیں معاف کردونگی ، گلا لئی

  

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک ، نیوز ایجنسیاں)پاکستان تحریک انصاف کی سابق رہنما رکن قومی اسمبلی عائشہ گلالئی نے دعویٰ کیا ہے چیئرمین عمران خان نے انہیں میسج پر شادی کی پیشکش کی تھی۔معاملے پر کوئی قانونی کارروائی کرنے کا ارادہ نہیں رکھتی جبکہ پریس کانفرنس کرنے کا مقصد صرف خواتین کو یہ پیغام دینا تھا تاکہ آئندہ کسی اور خاتون کیساتھ ایسا کچھ نہ ہو۔ سیاسی سفر جاری رکھوں گی ۔ عمران خان اگر معافی ما نگیں اور اس بات کو تسلیم کرلیں تو وہ معاف کردونگی ، عمران خان ایسے آزاد ماحول کے خواہشمند ہیں جسکی اجازت ہمارا معاشرہ نہیں دیتا ۔ا نھو ں نے یہ انکشاف بھی کیا کہ 2014 کے دھرنے میں عمران خان نے جلسے میں شادی کی بات صرف اس لیے کی تھی کہ وہ لڑکیوں کو متاثر کرکے دھرنے میں شامل کرنا چاہتے تھے تاکہ اس طرح لوگوں کی تعداد زیادہ ہوسکے ۔نجی ٹی وی کوانٹرویو میں انکامزید کہنا تھا شادی کی پیشکش کے بعد سے انہیں عمران خان کی جانب سے مسلسل غیر اخلاقی میسجز آتے رہے جس پر ان کے والد صاحب نے بھی نوٹس لیا، جب میرے والد نے عمران خان سے پوچھا کہ وہ ایسا کیوں کررہے ہیں تو وہ بات کو دوسری طرف لے جاتے تھے، لیکن ان متنازع میسجز نے میرے پورے خاندان کو متاثر کیا ۔اگرچہ میرا رویہ بہت مناسب رہتا تھا، لیکن ایک مرتبہ ان میسجز پر میں نے عمران خان کو سخت غصے میں جواب دیا کیونکہ ایسے میسجز سے مجھے کافی تکلیف ہوئی۔انھوں نے بتایا شادی کی پیشکش ریحام خان سے شادی سے قبل کی تھی تاہم اْس کے بعد بھی انھوں نے ایک میسج میں شادی کی طرف اشارہ کیا تھا۔عمران خان میسجز میں دھمکیاں نہیں بلکہ غلط زبان اور غلط الفاظ کا استعمال کیا کرتے تھے جو نا قابل قبول ہیں۔عمران خان کے بعد پارٹی کے ترجمان نعیم الحق کی طرف سے بھی شادی کیلئے میسجز آئے جبکہ عمران خان صرف میسجز کی حد تک ہی نہیں بلکہ ملاقاتوں کے دوران بھی اس طرح کی بات کرنے کی کوشش کیا کرتے تھے۔ عمران خان کیخلاف تمام ثبوت موجود ہیں اور وہ پارلیمانی کمیٹی کیساتھ ہر قسم کا تعاون کریں گی۔ تحریک انصاف چھوڑنے پر جس طرح کا درِ عمل آیا انھیں اس کا اندازہ نہیں تھا۔ میرے استعفے کو سیاسی رنگ دینے کی کوشش کی جارہی ہے اور اس وقت تحریک انصاف کا پورا مافیا میرے اور میرے والد کے سامنے کھڑا ہوچکا ہے۔

عائشہ گلالئی

مزید :

صفحہ اول -