مسلم لیگ (ن) شہباز شریف کو وزارت عظمی کیلئے سامنے لے آئی

مسلم لیگ (ن) شہباز شریف کو وزارت عظمی کیلئے سامنے لے آئی

لاہور(جنرل رپورٹر،نیوزایجنسیاں) پاکستان مسلم لیگ (ن) نے پارٹی صدر میاں شہباز شریف کووزیر اعظم کے عہدے کیلئے امیدوار نامزد کر دیا ہے، وزارت عظمی کے لیئے شہباز شریف کی بطور امید وار نامزدگی کی منظوری گزشتہ روز مجلس عاملہ کے اجلاس میں دی گئی ۔ن لیگ کے اس اہم اجلاس کے بعد میڈیا سے گفتگو میں پارٹی ترجمان مریم اورنگزیب نے کہا کہ میاں محمد شہباز شریف کو وزارتِ عظمیٰ کا امیدوار نامزد کر دیا گیا ہے۔8 اگست کو دھاندلی کیخلاف الیکشن کمیشن کے سامنے احتجاج کیا جائے گا،عوام کا مینڈیٹ عمران خان کو دینے کی کوشش کی گئی ،ا نتخابی نتائج کو روک کر منظم دھاندلی کی گئی اور نتائج کو تبدیل کیا گیا پولنگ ایجنٹس کے فارم 45 کی بجائے کچے کاغذ پر نتائج لکھ کر دیے گئے مسلم لیگ ن دھاندلی کے خلاف وائٹ پیپر جاری کرے گی۔ان کا کہنا تھا کہ پنجاب میں نمبرز گیم پر ہی فیصلہ ہو گا، ہم آزاد امیدواروں سے رابطے میں ہیں، تاہم جہاں آزاد امیدواروں کی نوٹوں کی منڈی لگی ہو، وہاں (ن) لیگ ایسی سیاست نہیں کرے گی۔مریم اورنگزیب نے کہا کہ عمران خان نے خیالی اور خود ساختہ وزیرِاعظم بننے کے بعد جو تقریر کی اس کی لاج رکھیں، انہوں نے کہا تھا کہ جتنے حلقے چاہیں گے وہ کھولنے کو تیار ہیں۔نام نہادکامیابی رکھنے والا عمران خان اگر وزیر اعظم بن گیا تو پھر بھی نام نہاد کہلائے گا۔قبل ازیں گزشتہ روز ماڈل ٹاؤن میں صدر مسلم لیگ (ن) شہباز شریف کے زیرِ صدارت مرکزی ورکنگ کمیٹی کا اجلاس ہوا جس میں وفاق اور پنجاب کی سیاسی صورتحال کے حوالے سے معاملات پر غور کیا گیا جبکہ وزیرِاعظم کے امیدوار اور پنجاب میں اپوزیشن لیڈر کے حوالے سے مشاورت بھی کی گئی۔ مسلم لیگ (ن) کے صدر شہباز شریف نے اپنے زیر صدارت ہونیوالے مرکزی مجلس عاملہ کے اجلاس میں اسلام آباد میں تین روز ہ قیام کے حوالے سے اپنی سرگرمیوں کے بارے میں شرکاء کو آگاہ کیا ۔اجلاس میں مسلم لیگ (ن) کے مرکزی رہنماؤں نے مرکزمیں اپوزیشن کا کردار اد ا کرنے کے حوالے سے حمایتی جماعتو ں کو ساتھ لیکر چلنے کے حوالے سے بھی تبادلہ خیال اور پنجاب میں حکومت سازی کے حوالے سے مختلف امور پر بحث کی ۔مرکزی مجلس عاملہ کے اجلاس میں سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی سمیت سابق وفاقی وزراء مریم اورنگزیب ،خواجہ سعد رفیق اور دیگر شامل ،شرکانے اپنی اپنی آراء کے حوالے سے شہبازشریف کو آگاہ کیا۔اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے صدر مسلم لیگ (ن) شہباز شریف کا کہنا تھا کہ حکومت سازی کے لئے تمام آپشنز پر غور کیا جا رہا ہے، بصورت دیگر مرکز اور پنجاب میں اپوزیشن کا بھرپور کردار ادا کریں گے اور تمام سیاسی حلیفوں کو ساتھ لے کر چلیں گے۔اس موقع پر شہباز شریف نے مزید کہا کہ کل بدھ کو مسلم لیگ ن کا اعلی سطی اجلاس ہو گا جس میں پنجاب کی وزارت اعلی کے لیئے امید وار سمیت دیگر عہدوں کے لیئے امید واروں کے نام فائنل کیئے جائیں گے ۔انھوں نے کہا کہ اگر عمران خان خود کو کھلاڑی سمجھتے ہیں تو ان کو ان کی زبان میں ہی جواب دیا جائے گا۔ جبکہ سابق صوبائی وزیر رانا مشہود نے پنجاب میں اکثریت ملنے کا دعویٰ کرتے ہوئے کہا کہ حکومت سازی کے لئے نمبرز گیم حوصلہ افزا ہے، پنجاب میں حکومت سازی کے لئے مطلوبہ تعداد پوری کر لی جبکہ وفاق میں بھی بات چیت جاری ہے۔

شہباز شریف ،اجلاس

مزید : صفحہ اول