نشتر ہسپتا ل کی تنظیم نو کیلئے فنڈز طلب کر نیکا فیصلہ

نشتر ہسپتا ل کی تنظیم نو کیلئے فنڈز طلب کر نیکا فیصلہ

ملتان(وقائع نگار)چیف جسٹس آف پاکستان ثاقب نثار کے دورے کے بعد نشتر ہسپتال میں معاملات کی بہتری کیلئے ہسپتال کی تنظیم نو (ری ویمپنگ) لیبر روم کی اپ لفٹنگ ،سینئر ڈاکٹرز (بقیہ نمبر19صفحہ12پر )

کی صبح ساڑھے آٹھ بجے سے دوپہر دو بجے تک کی حاضری یقینی بنانے کا فیصلہ کیا گیا ہے اس سلسلے میں وائس چانسلر نشتر میڈیکل یونیورسٹی ملتان پروفیسر ڈاکٹر مصظفےٰ کمال پاشا کی صدارت میں ہنگامی اجلاس گزشتہ روز ہوا۔جس پروفیسر ڈاکٹر ہما قدوسی کو لیبر روم کا انچارج مقرر کیا گیا اور انہیں لیبر روم کی اپ لفٹنگ کیلئے خصوصی ٹاسک دیا گیا ہے وہ روزانہ کی بنیاد پر لیبر روم کا دورہ کریں گی اور مریضوں کے مسائل کیلئے اقدامات اٹھائیں گی،نشتر ہسپتال کی تنظیم نو کیلئے حکومت پنجاب سے الگ سے فنڈز طلب کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے تاکہ ہسپتال کے فرش اور ٹوٹ پھوٹ کا شکار دیگر مقامات کی مرمت کروائی جائے گی۔اجلاس میں فیصلہ کیا گیا ہے کہ تامم سینئر ڈاکٹر صبح ساڑھے 8بجے سے دوپہر دو بجے تک حاضری کو یقینی بنائیں گے کوالٹی کنٹرول اور انفیکشن کنٹرول کیلئے پروفیسر ڈاکٹر افتخار حسین کی سربراہی میں کمیٹیاں تشکیل دے دی ہیں اجلاس میں یہ بھی فیصلہ کیا گیا کہ تمام ڈاکٹرز ایک دن کی تنخواہ ڈیموں کی تعمیر کیلئے حکومت کو جمع کرواکر تمام ڈاکٹرز ایک دن کی تنخواہ ڈیموں کی تعمیر کیلئے حکومت کو جمع کروائیں گے اجلاس میں تمام شعبوں کے سربراہان،ڈین،پروفیسرز نے شرکت کی۔

لیبر روم اپ لفٹنگ

مزید : ملتان صفحہ آخر