آرٹیکل 35.Aکی منسوخی کیخلاف اسلام آباد میں بھارتی ہائی کمشن کے سامنے احتجاج

آرٹیکل 35.Aکی منسوخی کیخلاف اسلام آباد میں بھارتی ہائی کمشن کے سامنے احتجاج

اسلام آباد(صباح نیوز) بھارتی آئین کے آرٹیکل 35-A کی منسوخی کے بھارتی منصوبے کے خلاف پیر کو اسلام آباد میں بھارتی ہائی کمشن کے سامنے احتجاجی مظاہرہ کیا گیا مظاہرین نے اقوام متحدہ سے مطالبہ کیاکہ وہ بھارت کومقبوضہ کشمیرمیں انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزیوں اور آرٹیکل 35-A کی منسوخی سے روکے۔مظاہرے کا اہتمام کل جماعتی حریت کانفرنس نے کیا تھا مظاہرے سے خطاب کرتے ہوئے حریت رہنماؤں نے کہاہے کہ (بقیہ نمبر60صفحہ12پر )

بھارت مقبوضہ کشمیر کی خصوصی حیثیت آرٹیکل 35-A ختم کر کے مقبوضہ کشمیر میں آبادی کا تناسب تبدیل کرنا چاہتا ہے آرٹیکل 35-A ختم ہونے کے بعد غیر ریاستی باشندے مقبوضہ کشمیر میں زمین خرید سکیں گے جس سے بھارت رائے شماری کو اپنے حق میں استعمال کرسکے گا،بھارت مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزیوں سے دنیا کی توجہ ہٹانے کے لیے ایسے اقدامات کررہا ہے۔ان خیالات کااظہار کل جماعتی حریت کانفرنس کے کنونیئر غلام محمد صفی ،حریت رہنماؤں سید فیض نقشبندی ،میر طاہر مسعود،الطاف بٹ ،محمدفاروق رحمانی، ایڈووکیٹ پرویز احمد ،رفیق ڈار،عبدالمجید و دیگر نے بھارتی سفارتخانے کے سامنے احتجاجی مظاہرے سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔مظاہرین نے آرٹیکل 35-A کی منسوخی اور مقبوضہ کشمیر میں آبادی کے تناسب کو تبدیل کرنے کے خلاف شدید نعرے بازی کی اور اقوام متحدہ سے مطالبہ کیا کہ وہ بھارت کی انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزیوں اور آرٹیکل 35-A کی منسوخی سے اس کو روکے۔ غلام محمد صفی نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ بھارتی سیاستی طور پر ناکام ہونے کے بعد عدالت کے ذریعے آرٹیکل 35-A کو ختم کرنا چاہتا ہے تاکہ غیر ریاستی باشندوں کو مقبوضہ کشمیر میں آباد کیا جا سکے اور جب اقوام متحدہ کی قراردادوں کے مطابق رائے شماری ہو تو اس پر اثرانداز ہویاجائے بھارت مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزیاں کر رہا ہے بھارت فوجی قوت سے آزادی کی تحریک دبانے کی کوشش میں ناکامی کے بعد عدالت کے ذریعے مقبوضہ کشمیر کی آبادی کا تناسب تبدیل کرنے کی بھر پور کوشش کررہا ہے۔بھارت کی اس سازش کا بھی بھر پور مقابلہ کریں گے اور اس کو اس سازش میں کامیاب نہیں ہونے دیں گے بھارت نے مقبوضہ کشمیر میں حریت رہنماؤں کو گرفتار کیا ہوا ہے اور ان پر بے بنیاد مقدمات بنا رہا ہے مگر اس سے تحریک آزادی نہیں روکے گی ۔محمدفاروق رحمانی نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ بھارت مقبوضہ کشمیر میں شرمناک جرائم کا مرتکب ہو رہا ہے اقوام متحدہ مقبوضہ کشمیر کی صورتحال کا جائزہ لینے کے لیے ایک انکوائری کمیشن قائم کرے جوان تمام چیزوں کی تحقیق کرے ۔

احتجاجی مظاہرہ

مزید : پشاورصفحہ آخر