اسلام آباد ہائیکورٹ،العزیزیہ اورفلیگ شپ ریفرنس منتقلی کی درخواست پرفیصلہ محفوظ

اسلام آباد ہائیکورٹ،العزیزیہ اورفلیگ شپ ریفرنس منتقلی کی درخواست پرفیصلہ ...
اسلام آباد ہائیکورٹ،العزیزیہ اورفلیگ شپ ریفرنس منتقلی کی درخواست پرفیصلہ محفوظ

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)اسلام آباد ہائیکورٹ نے نوازشریف کی العزیزیہ اورفلیگ شپ ریفرنس منتقلی کی درخواست پرفیصلہ محفوظ کر لیا۔

تفصیلات کے مطابق جسٹس عامر فاروق اور جسٹس گل حسن پر مشتمل دو رکنی بنچ نے نوازشریف کی العزیزیہ اور فلیگ شپ ریفرنس منتقلی کی درخواست کی سماعت کی۔

دوران سماعت جسٹس عامرفاروق اورنیب پراسیکیوٹر سردارمظفر کے درمیان مکالمہ ہوا،جسٹس عامر فاروق نے کہا کہ آپ کے قانونی حوالے میں آپ کی بات کاجواب موجود ہے،حوالے کے مطابق سپریم کورٹ اورہائیکورٹ کیس منتقل کرسکتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ قانونی حوالے کے مطابق چارج فریم ہونے یانہ ہونے کی بھی پابندی نہیں،دوسری عدالت منتقلی کے بعداسی سٹیج سے آگے بڑھایاجائےگا۔

نیب پراسیکیوٹر سردار مظفر نے کہا کہ میراموقف ہے چارج فریم ہونے کے بعدکیس منتقل نہیں کیاجاسکتا۔

عدالت نے نواز شریف کے وکیل خواجہ حارث اور نیب پراسیکیوٹر کے دلائل مکمل ہونے پر فیصلہ محفوظ کر لیا،جسٹس عامر فاروق نے کہاکہ کیپٹن(ر)صفدر کی سزامعطلی کی درخواست پرسماعت کل ہوگی،نوازشریف اورمریم نوازکی سزامعطلی سے متعلق درخواست پرسماعت پیرکوہوگی، جمعرات اور جمعہ کوبنچ دستیاب نہیں ہے۔

مزید : اہم خبریں /قومی /علاقائی /اسلام آباد