علی ظفر کے کنسرٹ میں نوجوانوں پر ”تھپڑوں“ کی بارش ہو گئی، انتہائی افسوسناک خبر آ گئی

علی ظفر کے کنسرٹ میں نوجوانوں پر ”تھپڑوں“ کی بارش ہو گئی، انتہائی افسوسناک ...
علی ظفر کے کنسرٹ میں نوجوانوں پر ”تھپڑوں“ کی بارش ہو گئی، انتہائی افسوسناک خبر آ گئی

  

کراچی (ڈیلی پاکستان آن لائن) گلوکار و اداکار علی ظفر جب کہیں کنسرٹ کرتے ہیں تو نوجوانوں کی لائنیں لگ جاتی ہیں تاکہ وہ اپنے سٹار کو براہ راست پرفارم کرتے ہوئے دیکھ سکیں۔ حال ہی میں ان پر لگنے والے الزامات کو ایک جانب رکھ کر دیکھا جائے تو وہ بلاشبہ ایک بہترین گلوکار ہیں جن کی آواز کانوں میں رس گھول دیتی ہے۔

علی ظفر گزشتہ کئی ہفتوں سے اپنی فلم ”طیفا ان ٹربل” کی تشہیری مہم میں مصروف رہے اور اس حوالے سے کئی کنسرٹس بھی کئے اور فلم ریلیز ہونے کے بعد بھی ان کے کنسرٹس جاری ہیں۔ علی ظفر نے آخری کنسرٹ کراچی میں اوراپنی عمدہ کارکردگی سے مداحوں کو جھومنے پر مجبور کر دیا لیکن اس کنسرٹ کا اختتام کچھ اچھا نہیں ہوا۔

مقامی خبر رساں ادارے کے مطابق کنسرٹ ختم ہونے کے بعد علی ظفر بیک سٹیج چلے گئے اور ان کیساتھ سیلفی لینے کے خواہشمند افراد کی لائنیں لگ گئیں تاہم وہاں موجود گارڈز نے نوجوانوں کو روک دیا۔

گارڈز نے بتایا کہ علی ظفر آج کسی کیساتھ سیلفی نہیں بنوائیں گے جس پر کچھ تو مایوس ہو کر چلتے بنے مگر کچھ افراد نے گارڈز کا حصار توڑتے ہوئے اندر داخل ہونے کی کوشش کی جس پر گارڈز بھی انہیں روکنے کی بھرپور کوشش کرتے رہے اور جب معاملہ بڑھ گیا تو گارڈز نے نوجوانوں پر تھپڑوں کی بارش کر دی۔

ذرائع کے مطابق کنسرٹ انتظامیہ نے مداخلت کرتے ہوئے معاملہ رفع دفع کرانے کی کوشش کی مگر گارڈز ایسے آپے سے باہر ہوئے کہ ان کی بات ماننے سے انکار کردیا اور نوجوانوں کو تشدد کا نشانہ بناتے رہے۔ اندر داخل ہونے کی کوشش کرنے والے تمام نوجوانوں کو زناٹے دار تھپڑ رسید کئے گئے جبکہ لڑکوں نے گارڈز کی جانب سے تشدد ہونے پر کوئی مزاحمت نہ کی اور بالآخر پسپائی اختیار کرنے پر مجبور ہو گئے۔

مزید : ڈیلی بائیٹس /تفریح /علاقائی /سندھ /کراچی