آدمی سٹیشن سے نابالغ لڑکی کو بیٹی بنا کر گھر لے گیا لیکن گھر پہنچتے ہی زندگی کا سب سے بڑا جھٹکا لگ گیا، 8 ماہ پر محیط ایسی داستان کہ آپ کو بھی افسوس ہوگا

آدمی سٹیشن سے نابالغ لڑکی کو بیٹی بنا کر گھر لے گیا لیکن گھر پہنچتے ہی زندگی ...
آدمی سٹیشن سے نابالغ لڑکی کو بیٹی بنا کر گھر لے گیا لیکن گھر پہنچتے ہی زندگی کا سب سے بڑا جھٹکا لگ گیا، 8 ماہ پر محیط ایسی داستان کہ آپ کو بھی افسوس ہوگا

  


رانچی (ڈیلی پاکستان آن لائن) بھارتی ریاست جھاڑ کھنڈ میں ایک نابالغ لڑکی کو 8 ماہ تک جنسی زیادتی کا نشانہ بنانے کے الزام میں پولیس نے ایک باپ اور بیٹے کو گرفتار کیا ہے۔

بھارتی میڈیا کے مطابق ریاست چھتیس گڑھ کی رہنے والی ایک 15 سالہ لڑکی کا گزشتہ برس نومبر سے اپنی والدہ کے ساتھ جھگڑا ہوا جس پر وہ گھر سے بھاگ کر ٹرین پر چڑھ گئی۔ لڑکی جھاڑ کھنڈ کے ہتیا سٹیشن پر پہنچی جہاں اس کی ملاقات بجرنگ بلی سا سے ہوئی جو وہیں ایک ہوٹل چلاتا تھا۔

بجرنگ بلی نابالغ لڑکی کو بیٹی بنا کر گھر لے آیا جہاں اس کے 25 سالہ بیٹے منا کمار کی نیت خراب ہوگئی۔ جب بجرنگ بلی ہوٹل پر چلا گیا تو اس نے پہلی بار نابالغ لڑکی کو زیادتی کا نشانہ بنایا اور 8 ماہ تک یہ سلسلہ جاری رہا۔ لڑکی نے کئی بار گھر سے بھاگنے کی کوشش کی لیکن بجرنگ بلی کی بیوی نے اسے گھر سے باہر جانے کی اجازت نہیں دی۔

8 ماہ کے ظلم و ستم برداشت کرنے کے بعد پیر کے روز لڑکی نے ایک پڑوسی کے موبائل فون سے اپنے والد کو فون کیا اور ساری کہانی بتائی۔ متاثرہ کا والد فوری طور پر اپنی بیٹی کو لینے پہنچ گیا لیکن بجرنگ بلی کی بیوی نے اسے گھر کے اندر داخل ہونے کی اجازت نہیں دی۔ متاثرہ لڑکی کے والد نے پولیس سے رجوع کیا جنہوں نے اسے بازیاب کراکے بجرنگ بلی سا اور اس کے بیٹے منا کمار سا کو گرفتار کرلیا۔

متاثرہ لڑکی کا بیان ریکارڈ کرنے اور اس کا میڈیکل کرانے کے بعد پولیس نے ملزم باپ بیٹے کو عدالت میں پیش کیا جہاں سے انہیں ریمانڈ پر جیل بھیج دیا گیا۔

مزید : جرم و انصاف