جسٹس قاضی فائز عیسیٰ کی پٹیشن میں بہت زیادہ مواد ہے ، آئینی ماہر رشید اے رضوی کا دعویٰ

جسٹس قاضی فائز عیسیٰ کی پٹیشن میں بہت زیادہ مواد ہے ، آئینی ماہر رشید اے رضوی ...
جسٹس قاضی فائز عیسیٰ کی پٹیشن میں بہت زیادہ مواد ہے ، آئینی ماہر رشید اے رضوی کا دعویٰ

  


اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) آئینی ماہر رشید اے رضوی نے کہا ہے کہ جسٹس قاضی فائز عیسیٰ نے جن بنیادوں پر اپنی پٹیشن میں سپریم کورٹ سے ریلیف مانگا ہے ، اس میں مواد تو بہت ہے ، بہتر ہوتا کہ وہ اس سلسلے میں کوئی وکیل کرلیتے ۔

جیونیوز کے پروگرام ”آج شاہ زیب خانزادہ کے ساتھ“میں گفتگو کرتے ہوئے رشید اے رضوی نے کہا کہ چودھری افتخار جب چیف جسٹس تھے تو اس وقت ان کی جانب سے بھی اپنے خلاف ریفرنس کوچیلنج کیا گیا تھا اور بار ایسوسی ایشنز نے بھی یہی کیا تھا اور موقف حکومت کی بد نیتی رکھا تھا ۔

انہوںنے کہا کہ اب جسٹس قاضی فائز عیسیٰ نے جن بنیادوں پر اپنی پٹیشن میں سپریم کورٹ سے ریلیف مانگا ہے ، اس میں مواد تو بہت ہے ، بہتر ہوتا کہ وہ اس سلسلے میں کوئی وکیل کرلیتے ۔ انہوں نے کہا کہ اس میں بہت سے چیزیں سامنے آئیں گی کہ کیا بیٹے اور بیوی کی جائیدادوں کے حوالے سے جج کوفارغ کیا جاسکتا ہے کیونکہ یہ کارروائی ابھی ریونیوڈیپارٹمنٹ تک نہیں پہنچی اور سپریم جوڈیشل کونسل نے قاضی فائز عیسیٰ کونوٹس جاری کردیا ۔ ان کا کہنا تھا کہ جسٹس قاضی فائز عیسیٰ کے معاملے میں سپریم کورٹ کے فل بنچ کا بیٹھنا ضروری ہے اور وہی اس کے حوالے سے کوئی فیصلہ کرے ۔

مزید : قومی /جرم و انصاف