اقوام متحدہ کشمیر کے حوالے سے اپنی قرار دادوں پر عمل کرائے: رضا بشیر تارڑ

  اقوام متحدہ کشمیر کے حوالے سے اپنی قرار دادوں پر عمل کرائے: رضا بشیر تارڑ

  

 اوٹاوا(آئی این پی)کینیڈا میں پاکستان کے ہائی کمشنر رضا بشیر تارڑ نے کہا ہے کہ  مسئلہ کشمیر  دنیا کا  فلش پوائنٹ بن چکا ہے،۔  مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی صورتحال کے بارے میں منعقدہ سیمینار میں شرکا سے خطاب کرتے ہوئے  پاکستان کے ہائی کمشنر نے کہا کہ مقبوضہ کشمیر کے نہتے شہری بھارتی مظالم کا بہادری سے مقابلہ کر رہے ہیں اور 72 سالوں کے طویل اذیت ناک دور کے بعد بھی کشمیری  اپنے حق خود ارادیت کے لئے لڑ رہے ہیں۔ بھارتی حکام اور میڈیا  اس حق خودارادیت کی جنگ کو دہشت گردی کے طور پر پیش کرنے کی ناکام کوششوں میں مصروف ہیں  جس میں بھارت کو ناکامی کے سوا کچھ حاصل نہ ہو گا۔ انہوں نے  کہا کہ کشمیریوں کو اقوام متحدہ کی قومی سلامتی کونسل جیسے اعلی ترین ادارے نے حق خودارادیت کا یقین دلایا، کشمیر دنیا کا سب سے طویل تنازعہ   ہے۔رضا بشیر تارڑ نے کہا کہ  ہندوتوا نظریہ علاقائی امن و سلامتی کے لئے سنگین خطرہ ہے،ہندوستان میں اقلیتیں اب محفوظ نہیں ہیں۔ پاکستانی ہائی کمشنر نے اس بات کا اعادہ کیا کہ  پاکستان کی حکومت اور  عوام کشمیریوں کو ان کے کا جائز حق خودارادیت دلانے کیلئے  پر عزم ہیں دنیا آہستہ آہستہ مودی حکومت کی انتہا پسندی کی نوعیت اور  بھارت کے زیر تسلط مقبوضہ کشمیر میں کشمیریوں کے خلاف جاری ظلم و ستم کو تسلیم کررہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ کشمیری گذشتہ ایک سال سے بلا تعطل فوجی محاصرے میں ہیں  اقوام متحدہ  جموں و کشمیر کے حوالے سے اپنی قراردادوں پر عمل درآمد کرواتے ہوئے  مقبوضہ وادی میں حق رائے دہی کیلئے ٹھوس لائحہ عمل اختیار کرے۔  سیمینار  میں کینڈا  میں انسانی حقوق کے ممتاز  رکن  ڈاکٹر ظفر بنگش، کیرن روڈ مین، فرید خان، ڈاکٹر فوزیہ علوی، ڈاکٹر شبانہ حیدر اور فرحان مجاہد چک، پاکستانی سفارت خانے کے  قونصل جنرل عبد الحمید نے  بھی خطاب کیا 

رضا بشیر

مزید :

صفحہ آخر -