مصنوعات کی ویلیو ایڈ ڈسے جی ڈی پی میں 36ارب ڈالر اضافہ ممکن: عارف علوی

  مصنوعات کی ویلیو ایڈ ڈسے جی ڈی پی میں 36ارب ڈالر اضافہ ممکن: عارف علوی

  

 اسلام آباد (این این آئی) صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی نے کہا ہے کہ ملک میں سمارٹ لاک ڈاؤن سے کورونا پر قابو پانے میں مدد ملی، پاکستانی عوام نے کورونا سے بچاؤ کیلئے ضابطہ کار پر بھرپور طریقہ سے عمل کیا، پاکستان چاول برآمد کرنے والا بڑا ملک ہے، مصنوعات کی ویلیو ایڈڈ کے ذریعے برآمدات میں اضافہ کیا جا سکتا ہے۔ جمعرات کو انٹرنیشنل راول ایکسپو کے ورچوئل اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے صدر مملکت نے کہا کہ وزیراعظم عمران خان نے کورونا وبا کے تناظر میں متاثر ہونے والے افراد پر بھرپور توجہ مرکوز کی، مزدور اور دیہاڑی دار طبقہ کی احساس پروگرام کے ذریعے امداد کی گئی، پاکستان دیگر ممالک کے مقابلہ میں کورونا وبا سے کم متاثر ہوا ہے۔ کورونا وبا میں تیزی سے کمی آ رہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ تاجر اپنی مصنوعات کے ذریعے دنیا کو یہ بتا سکتے ہیں کہ وہ کیا بنا رہے ہیں، یہ نمائش تاجروں کو اپنی مصنوعات فروخت کرنے کا بہترین موقع فراہم کرتی ہے۔ تاجروں کی بیرون ملک سفارتخانوں میں تعینات کمرشل قونصلرز کے ساتھ روابط کو فروغ دینے کی ضرورت ہے۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان اپنی جی ڈی پی میں 36 ارب ڈالر اضافہ کی صلاحیت رکھتا ہے۔ہم زرعی ملک ہونے کی حیثیت سے روایتی پیداوار پر توجہ دیتے ہیں، پاکستان چاول برآمد کرنے والا بڑا ملک ہے۔ ہمیں فصلوں کی پیداوار میں بہتری لانے کی ضرورت ہے۔ فائبر، گارمنٹس، فیشن گارمنٹس کی مصنوعات کی ویلیو ایڈیشن کی ضرورت ہے۔ خام کپاس سے فیشن گارمنٹس برانڈڈ تک پانچ مرحلے ہیں۔ خام کپاس پیدا کرنے والے کو اس کا منافع کم اور برانڈڈ گارمنٹس بیچنے والے کو زیادہ ہوتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ بیورو کریسی کا کام کاروبار میں سہولت فراہم کرنا ہے، تاجروں کی شکایات کا ازالہ کرنا ان کی ذمہ داری ہے۔

عارف علوی 

مزید :

صفحہ آخر -