حق خود ارادیت ملنے تک پاکستان کشمیریوں کی ہر ممکن مد د جاری رکھے گا: وزیراعظم 

      حق خود ارادیت ملنے تک پاکستان کشمیریوں کی ہر ممکن مد د جاری رکھے گا: ...

  

اسلام آباد (سٹاف رپورٹر، مانیٹرنگ ڈیسک،نیوز ایجنسیاں) وزیراعظم عمران خان نے سلامتی کونسل کی جانب سے مسئلہ کشمیر کو اٹھانے کا خیر مقدم کرتے ہوئے کہا ہے اقوام متحدہ کے چارٹر کے مطابق عالمی امن برقرار رکھنا اس کی ذمہ داری ہے۔سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر جاری اپنے اہم بیان میں وزیراعظم نے کہا مسئلہ کشمیر 70 سال سے سلامتی کونسل کے ایجنڈے پر ہے۔ اقوام متحدہ کی قراردادوں پر عمل درآمد بھی سلامتی کونسل کی ہی ذمہ داری ہے۔ مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی بگڑتی صورتحال پر تشویش ظاہر کرنے پر کونسل ممبرا ن کے شکر گزار ہیں۔ کونسل ممبران نے کشیدگی میں کمی، عالمی قوانین کے احترام اور مسئلہ کشمیر کے پر امن حل پر زور دیا۔ مسئلہ کشمیر پر پاکستان کی پوزیشن بہت واضح اور غیر متزلزل ہے۔ اس کا حل اقوام متحدہ کی قراردادوں کے مطابق ہونا چاہیے۔ سلامتی کونسل نے کشمیریوں کو صاف شفاف ریفرنڈم کے ذریعے حق خود ارادیت دیا۔ کشمیریوں کو حق خود ارادیت ملنے تک پاکستان ہر ممکن مدد جاری رکھے گا۔قبل ازیں وزیراعظم عمران خان اور مشیر پارلیمانی امور ڈاکٹر بابر اعوان کے درمیان رابطہ ہوا جس میں پارلیمنٹ میں جاری قانون سازی سے متعلقہ آئینی اور قانون امور پر مشاورت ہوئی، وزیراعظم کا کہنا تھا عوام کیلئے ضروری قوانین ہر حال میں پارلیمنٹ لے کر جائیں گے۔بابر اعوان نے وزیراعظم کو پارلیمنٹ کے مشترکہ اجلاس کی کارروائی پر بریفنگ دی جس پر وزیراعظم نے اطمینان کا اظہار کرتے ہوئے قانون سازی کا عمل جاری رکھنے کی ہدایت کی۔ بابر اعوان نے کہا پارلیمنٹ کا وقار مؤثر قانون سازی کے ذریعے ہی برقرار رکھا جا سکتا ہے،عوامی مفاد کی قانون سازی کو ترجیحی بنیادوں پر ایوان میں لایا جا رہا ہے۔ اپوزیشن جماعتوں کو اپنے فیصلوں میں ملکی و قومی مفاد کو مدنظر رکھنا ہوگا۔

وزیراعظم 

مزید :

صفحہ اول -