پرنسپل سیکرٹری پی ایم، سیکرٹریز اسٹیبلشمنٹ اور داخلہ کو نوٹسزجاری، جواب طلب 

        پرنسپل سیکرٹری پی ایم، سیکرٹریز اسٹیبلشمنٹ اور داخلہ کو نوٹسزجاری، ...

  

 اسلام آباد (سٹاف رپورٹر)لاپتہ افراد کیس میں اسلام آباد ہائیکورٹ نے آئی جی اسلام آباد اور ایس ایچ او تھانہ لوئی بھیر کی سنگل بینچ کے فیصلے کیخلاف اپیل پر وزیر اعظم کے پرنسپل سیکرٹری، سیکرٹری اسٹیبلشمنٹ ڈویژن اور سیکرٹری داخلہ کو نوٹسز جاری کرتے ہوئے جواب طلب کرلیا۔ جمعرات کو اسلام آباد ہائیکورٹ کے چیف جسٹس اطہر من اللہ اور جسٹس لبنیٰ سلیم پرویز پر مشتمل ڈویژن بینچ نے آئی جی اسلام آباد اور ایس ایچ او تھانہ لوئی بھیر کی سنگل رکنی بینچ کے فیصلے کیخلاف درخواست پر سماعت کی۔ وفاقی کی جانب سے ایڈوکیٹ جنرل نیاز اللہ خان نیا ز ی عدا لت میں پیش ہوئے۔ درخواست میں عدالت سے اسلام آباد ہائیکورٹ کے سنگل بینچ کے فیصلے کو کالعدم قرار دینے کی استدعا کی گئی تھی، د ر خو ا ست میں مو قف اپنایا گیا تھا کہ اپیل پر فیصلہ ہونے تک عدالت سنگل بنچ کے فیصلے پر عملدرآمد روکنے کے احکامات جاری کرے، سنگل بنچ نے جے آئی ٹی رپورٹ میں مغوی کی بازیابی کیلئے کو ششو ں کو نظرانداز کرتے ہوئے فیصلہ دیا،کیا سرکاری ملازم کو کسی چارج شیٹ، انکوائری یا ادارہ جاتی کارروائی کے بغیر نوکری سے برطرف کیا جا سکتا ہے؟ کیا آئین کے آرٹیکل 199 کے تحت کسی فریق پر بیس لاکھ روپے کا جرمانہ عائد کیا جا سکتا ہے؟ عدالت نے فریقین کو نوٹسز جاری کرتے ہوئے جواب طلب کرلیا، سنگل بینچ کا فیصلہ معطل کردیا، تاہم عدالت نے قرار دیا کہ مغوی کو ایک ماہ میں بازیاب کرانے کا سنگل بینچ کا فیصلہ برقرار رہے گا۔ درخواست میں وزیراعظم کے پرنسپل سیکرٹری، سیکرٹری اسٹیبلشمنٹ ڈویژن، سیکرٹری داخلہ اور پروفیسر محمد شریف چوہدری کو فریق بنایا گیا تھا۔

نوٹس جاری

مزید :

صفحہ اول -