پنجاب، آٹے پر 5روپے کی سبسڈی، شوگر ملزما مالکان سے بھی مذاکرات کا فیصلہ 

پنجاب، آٹے پر 5روپے کی سبسڈی، شوگر ملزما مالکان سے بھی مذاکرات کا فیصلہ 

  

  ملتان (نیوز رپورٹر) سینئرصو با ئی وزیر،وزیرِخوراک پنجا ب عبدالعلیم خان نے کہا ہے کہ وزیراعظم عمران خان نے جنوبی پنجاب کو صوبہ بنانے کے وعدہ کی جانب پہلا قدم اٹھاتے ہوئے سیکرٹریٹ قائم کر دیا ہے،(بقیہ نمبر43صفحہ6پر)

جلد ہی اپنے وعدہ کوپایہ تکمیل تک پہنچا دیں گے، یہ بات انہوں نے ملتان میں ایک اجلاس کی صدارت کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہی۔ سینئر صوبائی وزیر نے کہا کہ پنجاب میں آٹا پر پانچ ارب روپے سے زائد کی سبسڈی دی جارہی ہے لیکن سندھ میں آٹا سبسڈی نہ ہونے کی وجہ پنجاب سے آٹا سندھ سمگل ہو رہا ہے لیکن سندھ کے عوام کو یہ آٹا مہنگے داموں ہی میسر ہے، صوبائی وزیر خوراک نے کہا پنجاب میں آٹے کی فراوانی اور قیمتوں میں استحکام کے بعد اب چینی سمیت دیگر اشیائے خوردونوش کی قیمتوں میں کمی اور وافر مقدار میں دستیابی کے لیے میکنزم بنا رہے ہیں۔عوام کی مہنگائی بارے شکایات پر بھی کارروائی ہو رہی ہے اور جہاں ضلعی انتظامیہ کی پرائس کنٹرول بارے غفلت پائی گئی تو متعلقہ افسر کے خلاف بھی کارروائی کریں گے صوبائی وزیر عبدالعلیم خان نے کہا شوگر ملز 70 فیصد چینی کمرشل اداروں کو فروخت کرتی ہیں جبکہ صرف30 فیصد چینی عام آدمی کے لیے مارکیٹ میں فروخت ہوتی ہے اس لیے شوگر ملز مالکان کے ساتھ مذاکرات کر کے انہیں عوام کے لیے اپنا منافع کم کرنے اور کمرشل اداروں سے منافع بڑھانے پر قائل کیا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ چینی کے ریٹیلرز کے خلاف کارروائی نہیں کررہے جہاں خرابی ہے وہاں ہاتھ ڈال رہے ہیں، نہ ہم پر کوئی دباو ¿ ہے نہ ہم برداشت کریں گے صوبائی وزیر نے کہا کہ ہم تمام اجناس پر نظر رکھے ہوئے ہیں اور ان کی قیمتوں اور دستیابی کو مانیٹر کررہے ہیں پنجاب میں 20 کلو آٹے کی قیمت 860 روپے مقرر ہے چکی والوں سے قیمت میں کمی کے لیے اقدامات کررہے ہیں 90 فیصد آٹا تھیلے کا استعمال ہوتا ہے اس لیے نان اور روٹی کی قیمت میں اضافے کا کوئی جواز نہیں۔قبل ازیں کمشنر آفس ملتان میں منعقدہ ایک اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے صوبائی وزیر خوراک پنجاب عبدالعلیم خان نے کہا ہے کہ ملتان ڈویڑن میں مقررہ نرخوں پر آٹا دستیاب ہے،ملتان ڈویڑن کے لئے ماہانہ32 ہزار734 میٹرک ٹن گندم کا کوٹہ مقرر ہے،اب تک 30 ہزار 366 میٹرک ٹن گندم ڈویڑن بھر کی فلور ملز کو جاری کی جا چکی ہے،آٹاکی قیمتوں میں استحکام پیدا کیا گیا اب چینی کی قیمت میں کمی کا میکنزم بنا رہے ہیں اجلاس میں کمشنرملتان ڈویڑن شان الحق،سیکر ٹری خوراک، ڈا ئریکٹر فوڈ پنجاب،سی پی او،ملتان ڈویڑن اور ضلعی انتظامیہ اورمحکمہ خوراک کے افسران شر یک تھے۔ اجلاس میں سینئر وزیرعبدالعلیم خان کو ملتان ڈویڑن میں گندم کے اسٹاک بارے بریفنگ دی گئی کہ ملتان ڈویڑن میں محکمہ خوراک کے پاس 603345 میٹرک ٹن گندم موجود ہے جبکہ فلور ملز کو روزانہ کی بنیاد پر گندم کا کوٹہ فراہم کیا جا رہا ہے اورتمام فلور ملز کی روزانہ بنیادپر باقاعدہ مانیٹرنگ کی جا رہی ہے۔اس موقع پر خطا ب کر تے ہو ئے عبدالعلیم خا ن نے کہا کہ کریانہ سٹوروں پر آٹے کی دستیابی کو مانیٹر کیا جا ئے اور مقررہ نرخوں کے بینرز اور پینا فلیکس بھی آویزاں جائے جائیں۔کمشنر ملتان ڈویڑن شان الحق نے صوبائی وزیر کو بریفنگ دیتے ہو ئے بتا یا کہ مارکیٹ میں 9 لاکھ 86 ہزار 20 کلو گرام کے بیگ فراہم کئے جا چکے ہیں،ملتان ڈویڑن میں 20 فلور ملز کو شو کاز نوٹس جاری کئے گئے ہیں جبکہ آٹا کی مقررہ قیمت پر فروخت کے لیے 1340 پوائنٹس چیک کئے گئے ہیں اس دوران100 خلاف ورزیاں پائی گئیں اور ذمہ دارو ں کو 4 لاکھ 50 ہزار جرمانہ کیا گیا۔

عبدالعلیم خان

مزید :

ملتان صفحہ آخر -