ایم ایل ون منصوبہ سے ملک کی تقدیر بدل جائیگی:ڈی ایس ریلوے 

   ایم ایل ون منصوبہ سے ملک کی تقدیر بدل جائیگی:ڈی ایس ریلوے 

  

  ملتان (نیوز رپورٹر) ڈویڑنل سپرنٹنڈنٹ ریلوے شعیب عادل نے کہا ہے کہ ڈی ایس سپیشل کامقصدریلوے کے سفرکومحفوظ بنانے کے لئے نقائص کی نشاندہی,آپریشنل شعبہ جات سیوابستہ افسران وسٹاف کی کارکردگی کا جائزہ لینااوراس میں نکھارپیداکرناہے.وہ گزشتہ (بقیہ نمبر4صفحہ6پر)

روز لیہ سیشیرشاہ تک مختلف اسٹیشنوں,پلوں,ریلوے ٹریک,پھاٹک سگنل.ٹیلی کام اوردیگرسسٹم کے معائنہ کے موقع پرافسران اسٹاف سے گفتگوکررہے تھے.اس موقع پرانہوں  نیایکنک سیایم ایل ون منصوبہ کی منظورکاخیرمقدم کرتے ہوئے مزیدکہا کہ یہ ہماری خوش قسمتی ہے کہ ہمارے ہوتے ہوئے پاکستان ریلوے ایک نئے سفرکاآغازکرنے جاری رہی ہے.تمام افسران اورسٹاف کو ایم آیل ون منصوبہ کی ہروقت تکمیل کے لیے کرداراداکرناچاہیے. آس کی تکمیل سے ملک کی تقدیر بدل جائیگی،اس منصوبے سے جہاں لاکھوں افراد کو روزگار ملے گا وہاں ٹرین کے سفر کے رومان میں مزید اضافہ ہو گا،محفوظ ٹرین آپریشن کے لئے تمام ڈویڑنل افسران کو متحرک کر دیا گیا ہے تاکہ مسافروں کا ریل کے سفر پر  اعتماد مزید بڑھایا جا سکے،ٹیمیں مختلف سیکشن کے ٹریک انسپکشن کے بعد رپورٹ جمع کروانے کی پابند ہیں،اب محفوظ ٹرین آپریشن کی راہ میں کوئی بھی رکاوٹ یا غفلت برداشت نہیں کی جائیگی،انہوں نے مزیدکہاکہ ریلوے ٹریک کولیول کراسنگ کے بغیرعبورکرنے والوں کوکسی صورت معاف نہیں کیاجائے گااورنہ ہی اس سلسلہ میں کسی دباؤکوجاطرمیں لایاجائیگا.ڈی ایس ریلوے ملتان ڈویڑن شعیب عادل نے گزشتہ روز لیہ  ریلوے اسٹیشن کی عمارت کا معائنہ کیا اسٹیشن پر موجود بکنگ آفس کا معائنہ کیا بکنگ آفس میں موجود ٹکٹوں کے کرائے بھی چیک کئے جبکہ بکنگ کلرک سے سوالات کئے،اس دوران  اسٹیشن پر موجود اسٹالز کو چیک کیا ریٹ لسٹ اور کھانے پینے کی چیزوں کا معیار بھی چیک کیا جبکہ اسٹیشن ماسٹر سمیت دیگر مختلف شعبے کے ملازمین سے بھی سوالات کئے،بعدازاں لیہ اسٹیشن سے روانہ ہو کر جمن شاہ ریلوے اسٹیشن پہنچے جہاں جمن شاہ ریلوے اسٹیشن کی عمارت اور  اسٹیشن پر موجود بیٹری روم، بتی روم، ویٹنگ روم کا معائنہ کیا جبکہ اسٹیشن ماسٹر سے سوالات بھی کئے،جمن شاہ اسٹیشن سے روانہ ہو کر لیول کراسنگ نمبر 82-A کو چیک کیا لیول کراسنگ پر موجود گیٹ مین کی ورکنگ کو چیک کیا اور ورکنگ سے سوالات بھی کئے، لیول کراسنگ سے روانہ ہو کر ریلوے ٹریک کا معائنہ کرتے ہوئے پی ڈبلیو آئی لیہ محمد  اکرم سے ریلوے ٹریک کے بارے میں سوالات کئے صیح  جوابات دینے اور ریلوے ٹریک کو اچھا مینٹین کرنے پر نقد انعام اور تعریفی سرٹیفکیٹ دیتے ہوئے ڈی ایس شعیب عادل کا کہنا تھا کہ یہ ریلوے ملازمین ہی ریلوے کا  اثاثہ ہیں  جن  کی  انتھک محنت کے  بغیر ریل  نہیں چل سکتی  ایسے ملازمین کی حوصلہ افزائی کرنے سے  ان  میں مزید محنت سے  کام کرنے کی لگن پیداہوتی ہے،بعدازاں کوٹ سلطان ریلوے اسٹیشن پہنچے جہاں عمارت کا معائنہ، اور اسٹیشن ماسٹر سے سوالات بھی کئے،کوٹ سلطان سے روانہ ہو کر احسان پور ریلوے اسٹیشن پہنچے، اسٹیشن ماسٹر سے سوالات کئے ساتھ ہی ریلوے کی ٹکٹوں کا کرایہ بھی چیک کیا جبکہ احسان پور کی عمارت کا بھی معائنہ کیا،مزید برآں احسان پور سے روانہ ہو کر دائرہ دین پناہ اسٹیشن پہنچے اسٹیشن کی عمارت کا معائنہ، اور اسٹیشن ماسٹر سے کمرشل، ٹریفک کے بارے میں سوالات کئے،جبکہ شعبہ سگنل کے متعلق سگنل انسپکٹر طارق فیروز سے سوالات کئے صیح جوابات دینے پر نقد انعام اور تعریفی سرٹیفکیٹ دیا،بعدازاں دائرہ دین پناہ سے روانہ ہو کر برج ٹی پی لنک کینال کا معائنہ کیا، جس کے بعد کوٹ ادو ریلوے اسٹیشن پہنچے جہاں عمارت کے ساتھ ساتھ ویٹنگ روم، پارسل آفس، بیڑی روم کا معائنہ کیا، بکنگ آفس کے معائنے کے دوران بکنگ آفس میں موجود ٹکٹوں کا کرائے بھی چیک کئے،جبکہ بکنگ کلرک اور گیٹ پر موجود ٹی سی آر سے سوالات کئے اور ٹی سی آر کا ماہانہ ٹارگٹ چیک کیا،اس دوران اسٹیشن ماسٹر اور تمام شعبوں کے اسٹاف سے سوالات کئے،بعدازاں کوٹ ادو سے  روانہ ہو  کر  ریلوے ٹریک پر کام کرتے ہوئے گینگ نمبر 6 کے  گینگ مینوں کا  کام چیک کیا اور سوالات بھی  کئے،اس موقع پر  ڈی   ایس ریلوے شعیب عادل  کے ہمراہ ڈویڑنل کمرشل آفیسر حمید اللہ لاشاری، ڈویڑنل مکینیکل انجینئر رانا عمران، ڈویڑنل انجینئر جمشید علی ، ڈویڑنل سگنل انجینئر اللہ دتہ لاشاری سمیت دیگر ڈویڑنل افسران بھی موجود تھے۔

شعیب عادل

مزید :

ملتان صفحہ آخر -