کمیونٹی ہسپتالوں میں آئسولیشن وارڈز قائم کی جائیں، پاک چائینہ چیمبر

       کمیونٹی ہسپتالوں میں آئسولیشن وارڈز قائم کی جائیں، پاک چائینہ چیمبر

  

لاہور(سٹی رپورٹر)ُپاک چائینہ جوائینٹ چیمبر آف کامرس اینڈانڈسٹری نے تجویز پیش کی ہے کہ کورونا جیسی متعدی بیماریوں کو پھیلنے سے روکنے کیلئے  ملک میں موجود کمیونیٹی ہسپتالوں میں فیور کلیینگ اور آئسولیشن وارڈز قائم کی جانی چاہییں۔ پاک چین چیمبر کے صدر زرک خان، سینئر نائب صدر معظم گھرکی اور سیکرٹری جنرل صلاح الدین حنیف اپنے ایک مشترکہ بیان میں کہا ہے کہ کورونا نے ملک میں جانی نقصان کے ساتھ ساتھ ناقابل برداشت معاشی نقصان پہنچایا ہے اور ہماری معیشیت مزید بحرن کی متحمل نہیں۔ انہوں نے کہا کہ کورونا کے معاشرتی اور معاشی بحران سے سبق حاصل کرتے ہوئے حکومت کو مستقبل کی پیش بندکرنی چاہیے۔ انہوں نے کہا کہ اس سلسلے میں  پرائمری ہیلٹھ کیئر کے مراکز کو اپ گریڈ کرنے کی اشد ضرورت ہے۔ ملک میں موجود پرائمری ہیلتھ ہسپتالوں پر تعینات عملہ کو بدلتے ہوئے حالات کے مطابق تربیت فراہم کی جانی چاہیے تاکہ کسی بھی بحران کی صور ت میں مقامی لوگوں کو بڑے شہروں میں منتقل کرنے پر وقت ضائع نہ ہواور جس علاقے میں کوئی متعدی وبا پھیلے اسے اسی مخصوص علاقے تک محدود رکھا جا سکے۔  انہوں نے کہا کہ مناسب تربیت کے ساتھ ساتھ پرائمری ہیلتھ کیئر کے ہسپتالوں کو تشخیصی ٹیسٹوں اور علاج کیلئے جدید میڈیکل ایکوئپمنٹ اور ٹیکنالوجی بھی فراہم کی جانی چاہیے۔پاک چین جوائینٹ چیمبر کے صدر زرک خان نے کہا کہ حکومت کو چاہیے کہ اس سلسلے میں نہ صرف کے تجربہ سے سبق حاصل کیا جائے۔

 بلکہ چینی ماہرین اور چینی ہیلٹھ ٹیکنالوجی کی پاکستان منتقلی کیلئے سفارتی سطح پر کوششیں کی جانی چاہیں۔ انہوں نے کہا کہ چین کے ساتھ ملکر پاکستان میں صحت کے شعبہ کی بہتری کیلئے ایک جامع منصوبہ تشکیل دیا جا نا چاہیے۔پاک چین چیمبر کے سینئر نائب صدر معظم گھرکی اور سیکرٹری جنرل صلاح الدین حنیف نے کہا ہے کہ پاک چین چیمبر چین کے ساتھ معاشی تعلقات کو فرو غ دینے کے ساتھ ساتھ معاشرتی اور ثقافتی روابط کو بھی فرو غ دینے کے اقدامات کر رہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ وہ اپنے چیمبر کی سطح پر صحت کے شعبہ میں بھی چین کے تعاون کے حصول کیلئے کوششیں برؤے کار لائیں گے۔

مزید :

کامرس -