شاہد خاقان روٹھ گئے، شہباز پریشان عطا، تارڑ، محسن رانجھا نے منا لیا 

شاہد خاقان روٹھ گئے، شہباز پریشان عطا، تارڑ، محسن رانجھا نے منا لیا 

  

  اسلام آباد (این این آئی)مسلم لیگ ن کے رہنما اور سابق وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی اپنی ہی پارٹی سے روٹھ گئے اور پارلیمانی پارٹی کے مشترکہ اجلاس میں شرکت کی بجائے اپوزیشن چیمبر میں روٹھے بیٹھے رہے،شاہد خاقان عباسی کی اجلاس میں عدم شرکت پر اپوزیشن لیڈر اور مسلم لیگ ن کے صدر شہبازشریف کی ہدایت پر عطا تارڑ اور محسن رانجھا نے اپوزیشن چیمبر میں جاکر شاہد خاقان عباسی کو منایا اور اپنے ساتھ لے کر اجلاس میں آئے۔تفصیلات کے مطابق گزشتہ روز مسلم لیگ (ن)کی پارلیمانی پارٹی کا مشترکہ اجلاس قائدحزب اختلاف شہباز شریف کی زیر صدارت ہوا جس میں پارٹی رہنماؤں نے شرکت کی تاہم شاہد خاقان شریک نہیں ہوئے جنہیں شہبازشریف کی ہدایت پر عطاتارڑ اور محسن رانجھا منا کر اجلاس میں لائے۔اس موقع شہباز شریف نے حکومتی معاشی پالیسیوں پر کڑی تنقید کرتے ہوئے کہاکہ کورونا سے پہلے ہی ہماری معیشت تباہ ہوچکی تھی۔ کورونا وبا آنے سے پہلے ہی قومی معیشت ہچکولے کھارہی تھی۔ تحریک انصاف کے دور حکومت میں کرپشن کے تاریخی سکینڈل سامنے آئے تاہم حکومت کے کان پر جوں تک نہیں رینگی۔ حکومت نے عیدالاضحی سے پہلے عوام پر پٹرول کی قیمتوں میں اضافے کا بم گرایا،گندم کی فصل کٹتے ہی پہلے دن سے گندم غائب ہوگئی،ایسا ملکی تاریخ میں کبھی نہیں ہوا۔ انہوں نے کہاکہ سفارتی و داخلی محاذ پر حکومتی کی ناکامی اور نااہلی سب کے سامنے عیاں ہے۔اس موقع پر پارٹی رہنماؤں نے کہا کہ مشکل حالات میں اگر کوئی جماعت پرعزم رہی وہ مسلم لیگ ن ہی ہے،مسئلہ کشمیر کو اگر کوئی جماعت منطقی انجام تک پہنچا سکتی ہے وہ مسلم لیگ ن ہے۔

شاہد خاقان 

مزید :

صفحہ اول -