بجٹ میں ڈیوٹی کم کرنے سے تاجر مطمئن نہیں، مشیر تجارت 

بجٹ میں ڈیوٹی کم کرنے سے تاجر مطمئن نہیں، مشیر تجارت 

  

فیصل آباد(سٹی رپورٹر) بجٹ میں ڈیوٹیاں کم کرنے کے بعد ٹیرف ریشنلائزیشن کیلئے 30سال کا جامع روڈ میپ تیار کیا جا رہا ہے جبکہ پہلے مرحلے میں ٹیکسٹائل سیکٹر بارے خصوصی میٹنگ سوموار کو ہو گی۔ یہ بات وزیر اعظم کے مشیر برائے تجارت عبدالرزاق داؤد نے آج زوم کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے بتائی۔ ملکی صنعت و تجارت کو ٹھوس بنیادوں پر استوار کرنے کیلئے زمینی حقائق کے مطابق دورس پالیسیاں زیر غور ہیں، ٹیرف ریشنلائزیشن کے حوالے سے ہر سیکٹر کیلئے الگ الگ پالیسی طے کی جائے گی۔ وہ اس کام کو جلد از جلد مکمل کرنا چاہتے ہیں۔ بجٹ کی وجہ سے جولائی میں یہ کام شروع نہ کیا جا سکا جبکہ اس کام کو فاسٹ ٹریک پر مکمل کرنے کیلئے رواں ماہ کے دوران مشاورت کا سلسلہ شروع کیا جا رہا ہے۔ بجٹ میں ڈیوٹی کو کم کیا گیا لیکن تاجروں اور صنعتکاروں کی بڑی تعداد اس سے مطمئن نہیں کیونکہ صرف ڈیوٹیوں میں کمی کافی نہیں اس کیلئے ٹیرف ریشنلائزیشن کی بھی ضرورت ہے اور اس میں مختلف سیکٹر پر الگ الگ غور ہوگا۔ کسٹم ڈیوٹی کو ہاتھ نہیں لگا سکتے جبکہ اضافی کسٹم ڈیوٹی اور ٹیرف ریشنلائزیشن پر پوری توجہ دی جائے گی۔سوموار کو اس سلسلہ میں میٹنگ ہو گی جس میں صرف ٹیکسٹائل کے شعبہ پر بات ہو گی۔ 

رزاق داؤد

مزید :

صفحہ آخر -