ماسک پہن کر ڈاکٹر کی 35 کلو میٹر دوڑ، ماسک کے بارے میں تمام افواہیں غلط ثابت کردیں

ماسک پہن کر ڈاکٹر کی 35 کلو میٹر دوڑ، ماسک کے بارے میں تمام افواہیں غلط ثابت ...
ماسک پہن کر ڈاکٹر کی 35 کلو میٹر دوڑ، ماسک کے بارے میں تمام افواہیں غلط ثابت کردیں

  

لندن(مانیٹرنگ ڈیسک) کورونا وائرس کی وباءکے پیش نظر بیشتر ممالک میں عوامی مقامات پر فیس ماسک پہننا لازمی قرار دیا گیا ہے تاہم فیس ماسک کے حوالے سے کئی طرح کی افواہیں بھی گردش میں ہیں، جن میں سے ایک یہ ہے کہ مسلسل ماسک پہننے سے جسم میں آکسیجن کا لیول کم ہو جاتا ہے۔ اب ایک برطانوی ڈاکٹر نے فیس ماسک کے ساتھ 35کلومیٹر دوڑ لگا کر اس افواہ کا خاتمہ کر دیا ہے۔

انڈیا ٹائمز کے مطابق اس آئی سی یو ڈاکٹر کا نام ٹام لاٹن ہے جس نے دنیا بھر میں فیس ماسک کے متعلق پھیلی اس افواہ کو ختم کرنے کا فیصلہ کیااور اسے پہن کر ایک میراتھن مکمل کر ڈالی۔ ٹام کا کہنا تھا کہ ”میں آئی سی یو میں کام کرتا ہوں۔ میں فزیالوجی جانتا ہوں چنانچہ میں جانتا تھا کہ یہ افواہ محض افواہ ہے۔ اس میں کوئی حقیقت نہیں ہے۔ میں اپنے شہر بریڈفورڈ میں 35کلومیٹر تک فیس ماسک پہن کر دوڑتا رہا اور اس دوران اپنے جسم میں آکسیجن لیول کو بھی ٹریک کرتا رہا۔ اس میں فیس ماسک کی وجہ سے معمولی سی بھی کمی واقع نہیں ہوئی۔اب میں مصدقہ طور پر کہہ سکتا ہوں کہ فیس ماسک کے متعلق لوگوں کا خوف غلط ہے۔“

مزید :

برطانیہ -