وزیر اعلیٰ شہبازشریف کا سرکاری ہستپالوں کی ایمرجنسیوں پر چھاپے مارنے کا فیصلہ

وزیر اعلیٰ شہبازشریف کا سرکاری ہستپالوں کی ایمرجنسیوں پر چھاپے مارنے کا ...

لاہور(جاوید اقبال)وزیر اعلیٰ پنجاب شہبازشریف نے لندن سے واپسی کے ساتھ کی صوبائی دارالحکومت کے بڑ ے سرکاری ہستپالوں کی ایمرجنسیوں پر اچانک چھاپے مارنے کا سلسلہ شروع کرنے کیلئے متعلقہ انتظامیہ کو آگاہ کر دیا ہے جس کی تیاریاں شروع کر دی گئی ہیں۔چھاپوں کے دوران ایمر جنسیوں، انڈورز میں مریضوں کو دی جانیوالے سہولیات اور مریضوں کے مسائل حل کرنے میں ناقص کارکردگی کی انتظامیہ کو موقع پر معطل کر دیا جائے گا اس سلسلہ میں سیکیورٹی کے خاطر خواہ انتظامات کیلئے سیکیورٹی اداروں کو ہدایات جاری کی گئی ہیں جبکہ اس حوالے سے سپیشل برانچ کو بھی خصوصی ہدایات جاری کی گئی ہیں کہ وہ وزیر اعلیٰ کے دورہ سے قبل ہسپتالوں پر ایک مفصل رپورٹ تیار کر کے وزیر اعلیٰ کو فراہم کریں ۔ذرائع کا کہنا ہے کہ وزیر اعلیٰ کور پورٹ پیش کی گئی تھی کہ ٹیچنگ اور ڈسٹرکٹ ہسپتالوں میں مریضوں کے ساتھ انسانیت سوز سلوک کیا جا رہا ہے۔ان ڈور اور آؤٹ ڈور میں ادویات فراہم نہیں کی جا رہیں ،ہسپتالوں میں صفائی کا انتظام انتہائی ناقص ہے،آپریشن کیلئے مریضوں بروقت طبی امداد نہیں دی جاتی،معمولی آپریشن کیلئے بھی سرجنز کئی کئی ماہ انتظا رکراتے ہیں جبکہ سٹی سکین ،ایم آر آئی ،الٹر ا ساؤنڈ ایکسرے سمیت ہر ٹیسٹ کے چارجز لیے جا رہے ہیں ۔جبکہ ایل پی سمیت دیگر ٹھیکہ جات میں انتہائی بے ضابطگیاں پائی جا رہی ہیں جس پر وزیر اعلیٰ نے محکمہ صحت اور دیگر ارکان کو آگاہ کیا ہے کہ وہ ہر ہسپتال کی ایمر جنسی سمیت دیگر شعبہ جات میں اچانک چھاپے ماریں گے اور موقع پر جا کر مریضوں سے حالات دریافت کریں گے اور جہاں بد انتطامی پائی جائے گی اس ہستپال کی انتظامیہ کو عہدوں سے فارغ کرنے کے ساتھ ساتھ معطل بھی کیا جائے گا اور آئندہ اہم سیٹ پر تقرری بھی نہیں دی جائے گی۔ذرائع کا دعویٰ ہے کہ وزیر اعلیٰ لند ن سے واپسی پر لاہور کے سب سے بڑے میو ہسپتال سے آغاز کریں گے جس کے بعد دیگر ہسپتالوں میں بھی اچانک سرپرائز وزٹ کریں گے۔

مزید : صفحہ آخر