جرمنی کا این ٹی ڈی سی کے منصوبوں میں سرمایہ کاری کیلئے اظہاردلچسپی

جرمنی کا این ٹی ڈی سی کے منصوبوں میں سرمایہ کاری کیلئے اظہاردلچسپی

  

لاہور (کامرس رپورٹر)جرمنی کی سفیر برائے پاکستان مس اینا لیپل (Ina Lepel) نے کہا ہے کہ جرمنی جنوبی ایشیاء میں پاکستان کو ایک اہم پارٹنر سمجھتا ہے اور اس کے توانائی کے شعبے کی ترقی کے لئے مزید تعاون کیا جائے گا۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے نیشنل ٹرانسمیشن اینڈ ڈسپیچ کمپنی لمیٹڈ (این ٹی ڈی سی) کے منصوبے 500kV گرڈ سٹیشن نوکھر، گوجرانوالہ کے دورے کے دوران کیا۔ یہ گرڈ سٹیشن جرمن بنک KfW کے تعاون سے تعمیر کیا گیا تھا۔ وفد میں مس اینا لیپل کے ساتھ فرسٹ سیکرٹری سباسٹیئن ارنسٹ اور KfW کے عہدیدار ڈاکٹر فلینک البرٹ ، مسٹر وولف گینگ مولرز اور ڈاکٹر پرویز نعیم شامل تھے۔قبل ازیں KfW بنک دو رکنی وفد نے منیجنگ ڈائریکٹر این ٹی ڈی سی ڈاکٹر فیاض احمد چودھری سے ان کے دفتر میں ملاقات کی۔ جس کے دوران انہوں نے این ٹی ڈی سی کے مستقبل کے گرڈ سٹیشنز اور ٹرانسمیشن لا ئنز منصوبوں کی تعمیرکیلئے تعاون کرنے کی خواہش کا اظہار کیا۔

ڈاکٹر فیاض احمد چودھری نے ان کی پیشکش کو خوش آمدید کہتے ہوئے کہا کہ جرمنی نے پاکستان کے پاور سیکٹر کی ترقی کیلئے اہم کردار ادا کیا ہے۔ اس سے پہلے این ٹی ڈی سی کے منصوبوں 500kV گرڈ سٹیشن شیخوپورہ، 500kV گرڈ سٹیشن شیخ محمدی پشاور اور گوجرانوالہ کے نزدیک 500kV نوکھر گرڈ سٹیشن بھی مذکورہ بنک کی مالی مدد سے تعمیر کئے جاچکے ہیں۔

گرڈ سٹیشن کے دورہ کے دوران جرمن سفیر برائے پاکستان اینا لیپل نے منصوبے کی مینٹیننس اور کارکردگی کو سراہا اور اس پر اطمینان کا اظہار کیا۔ جنرل منیجر جی ایس او سبز علی خان نے جرمن وفد کو بریفنگ دیتے ہوئے بتایا کہ 500kV گرڈ سٹیشن نوکھر کی تعمیر نے حافظ آباد، گوجرانوالہ، منڈی بہاؤالدین، گجرات، سیالکوٹ اور نارووال کے گھریلو، کمرشل، صنعتی اور زرعی صارفین کیلئے صارفین کو قابل ذکر فوائد حاصل ہوئے ہیں جن میں مستحکم وولٹیج پروفائل، جبری لوڈشیڈنگ کا خاتمہ اور متعلقہ علاقوں کے لوگوں کیلئے روزگار کے مواقع فراہم کئے ہیں۔

مزید :

کامرس -