جعلی اقرار نامہ بنا کر کوٹھی پر سابق تحصیلدارکا مبینہ قبضہ

جعلی اقرار نامہ بنا کر کوٹھی پر سابق تحصیلدارکا مبینہ قبضہ

  

لاہور(نامہ نگار)جعلی اقرار نامہ بنا کر 80سالہ بزرگ کی ایک کنال کی کوٹھی پر سابق تحصیلدارکا مبینہ قبضہ، مالک 10سال سے کوٹھی کے حصول کے لئے عدالتوں کے دھکے کھانے پر مجبور،سیشن عدالت نے معمرشخص کی درخواست پر ایس ایچ او جوہرٹاون کو 12دسمبر کو رپورٹ طلب کرلی ہے ۔ایڈیشنل سیشن جج عبدالغفار کی عدالت میں علامہ اقبال ٹاؤن کے رہائشی ضعیف العمرشخص سردار محمد نے درخواست دائر کرتے ہوئے موقف اختیار کیا کہ وہ انصاف کے لئے گزشتہ 10سال سے عدالتوں ،تھانوں اور کچہریوں کے چکر لگا رہا ہے ،اس کی جوہرٹاؤں میں ایک کنال کی کوٹھی ہے جس کا مبینہ طور پرجعلی اقرار نامہ بنا کر سابق تحصیلدار نعیم مونگا اور اس کے دیگر ساتھیوں نے قبضہ کررکھا ہے۔وزیراعلی پنجاب کو بھی درخواست دی جس پر انکوائری ہوئی اور سی سی پی کو حکم دیا گیا کہ کوٹھی کا قبضہ دلوایا جائے

،اس پر سی سی پی او نے ایس ایچ او جوہرٹاون کو حکم دیا لیکن عمل درآمد نہ ہوا ،عدالت سے استدعا ہے کہ اسے انصاف دلوایا جائے ،فاضل جج نے متعلقہ ایس ایچ او سے آئندہ سماعت پر رپورٹ طلب کرلی ہے۔

مزید :

میٹروپولیٹن 4 -