تبدیلی مذہب کا قانون اسلام اور آئین سے متصادم ہے‘ راشد نسیم

تبدیلی مذہب کا قانون اسلام اور آئین سے متصادم ہے‘ راشد نسیم

  

ملتان (سٹی رپورٹر)جماعت اسلامی پاکستان کے مرکزی نائب امیر راشد نسیم نے کہا ہے کہ سندھ حکومت نے قبول اسلام کے معاملے میں جوقانون سازی کی ہے اس کا خیال تو اہل مغرب کو بھی نہیں آیا سندھ اسمبلی نے صریحاََ اسلام اور آئین اور قر آن وسنت کی رہنمائی اور ہدایت سے(بقیہ نمبر7صفحہ12پر )

بغاوت کی ہے ۔ قوم کی نظر یں سپریم کورٹ پر لگی ہیں اُمید ہے کہ سپریم کورٹ کرپشن کے خاتمے کیلئے موثر اقدامامت کرے گی۔ کراچی دہشت گردی ، بوری بند لاشیں اور بھتہ خوری کا شہر بن گیا یہ سب کچھ نا اہل اور عوام دشمن قیادت کی وجہ سے ہوا ہے۔ جماعت اسلامی آئینی ، جمہوری طریعے سے ملک کے ہر شعبے میں تبدیلی اور انقلاب لانا چاہتی ہے۔ ہماری جنگ لٹیروں ، قاتلوں ، جاگیر داروں، وڈیروں اور کرپٹ مافیا سے ہے ۔ ان خیا لات کا اظہار لاہور سے ملتان پہنچنے پر جماعت اسلامی ملتان سٹی کے نائب امیر ڈاکٹر اورنگزیب شہزاد کے بھائی منیر خان کے انتقال پر تعزیت کے بعد کارکنوں سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ جماعت اسلامی پنجاب کے نائب امیر شیخ عثمان فاروق، امیر ملتان سٹی میاں آصف محمود اخوانی، جنوبی پنجاب کے میڈیا کوآر ڈی نیٹر کنور محمد صدیق ، خواجہ عاصم، نادر خان بھی موجود تھے۔ انہوں نے مزید کہا کہ سندھ اسمبلی میں مذہب کی تبدیلی کرنے کے حوالے سے جو قانون بنا یا ہے شریعت کے خلاف ہے ملک بھر کی تمام دینی جماعتوں نے اس کو مسترد کردیا ہے اگر حکومت سندھ نے اس کو واپس نہ لیا تو اس کے خلاف تحریک چلائی جائے گی بعدازں ڈیرہ غازی خان روانہ ہوگئے۔ جہاں پر وہ سیرت کانفرنس کے علاوہ مختلف پروگرامات سے خطاب کریں گے ۔

راشد نسیم

مزید :

ملتان صفحہ آخر -