علیحدہ صوبہ خودمختار ہائیکورٹ کے قیام کی تحریک جاری رکھیں گے‘ جمشید حیات

علیحدہ صوبہ خودمختار ہائیکورٹ کے قیام کی تحریک جاری رکھیں گے‘ جمشید حیات

  

ملتان (خبر نگار خصوصی) ہائیکورٹ بارایسوسی ایشن ملتان نے بارکونسلز کی جانب سے اظہارتشکر منانے کو جنوبی پنجاب کے وکلاء اورعوام کے زخموں پر نمک پاشی کرتے ہوئے آج لاہورہائیکورٹ کے فل کورٹ ریفرنس کے بائیکاٹ کا اعلان کر دیا۔اس ضمن میں ہائیکور ٹ بارکی ایگزیکٹوباڈی کا (بقیہ نمبر30صفحہ12پر )

اجلاس گزشتہ روز منعقد ہوا جس میں صدارت کرتے ہوئے صدر بارشیخ جمشید حیات نے کہاہے کہ لاہورہائیکورٹ کے ارباب اختیار اوربالائی پنجاب سے تعلق رکھنے والے وکلاء کے نمائندگان ،پاکستان وپنجاب بارکونسلز آپس میں یکجاہوکرجنوبی پنجاب کے وکلاء اورعوام کے حقوق سلب کرنے کے ساتھ ان کے ساتھ ناانصافی کرنے کے درپے ہیں اوروکلاء کا استحصال کیا جارہاہے اوربالخصوص جنوبی پنجاب کو صرف اس لئے نظر انداز کیاجارہا ہے کہ یہاں کے وکلاء نے تخت لاہور کی زیادتیوں کے خلاف علم جہاد بلندکرتے ہوئے علیحدہ صوبہ اورخودمختارہائیکورٹ کے قیام کا مطالبہ کررکھا ہے۔انھوں نے کہا کہ لاہورہائیکورٹ اوربالائی پنجاب کے وکلاء وتنظیمیں جشن اوراظہارتشکر منا کرجنوبی پنجاب کے وکلاء اورعوام کے زخموں پر نمک پاشی کررہے ہیں اس لئے آج لاہور میں ہونے والے فل کورٹ ریفرنس میں شرکت نہیں کریں گے۔ انھوں نے کہا کہ جنوبی پنجاب کے وکلاء علیحدہ صوبہ اورخودمختارہائیکورٹ کے قیام تک جاری رکھیں گے۔اجلاس میں نظامت کے فرائض جنرل سیکرٹری چوہدری عمر حیات نے انجام دئیے۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -