چیف جسٹس کی سیشن کورٹ بنوں کی زیر تعمیر عمارت کی جلد تکملی یقینی بنانے کی ہدایت

چیف جسٹس کی سیشن کورٹ بنوں کی زیر تعمیر عمارت کی جلد تکملی یقینی بنانے کی ...

  

پشاور( سٹاف رپورٹر)چیف جسٹس پشاور ہائی کورٹ مسٹر جسٹس مظہر عالم میا ں خیل نے متعلقہ حکام کو ہدایت کی ہے کہ وہ سیشن کورٹ بنوں کی زیر تعمیر عمارت کی جلد تکمیل کو یقینی بنائیں ۔انہوں نے کہا کہ اس سلسلے میں کوئی کوتائی برداشت نہیں کی جائی گی۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے اپنے دورہ بنوں کے دوسرے روز ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن کورٹ بنوں کی زیر تعمیر بلڈنگ کے کام کے معائنے کے دوران کیا۔چیف جسٹس پشاور ہائی کورٹ کو اس موقع پر نقشوں اور چارٹو ں کی مدد سے بتایا گیا کہ 258ملین روپے کی لاگت سے تعمیر ہونے والی اس نئی عمارت کا کام تقریبا مکمل ہو چکا ہے اور امید ہے کہ اسے جون2017سے قبل مکمل کر کے متعلقہ محکمہ کے حوالے کر دیا جائے گا۔اس موقع پر مزید بتایا گیا کہ زیر تعمیر عمارت کے لئے کچھ فنڈز کی کمی کی وجہ سے تکمیل کا کام سست روی کا شکار ہے ۔تاہم فنڈز ریلیز ہوتے ہی کام مکمل کر لیا جائے گا۔چیف جسٹس مظہر عالم میاں خیل زیر تعمیر عمارت کے مختلف حصوں میں گئے اور کام کے معیا ر اور رفتا ر کا تفصیل سے جائزہ لیا۔انہوں نے اس موقع پر عمارت کی تعمیر سے متعلق بعض ضروری ہدایات بھی جاری کیں۔ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج بنوں رجب علی ،ایڈشنل رجسٹرار پشاور ہائی کورٹ بنوں بنچ و دیگر جج صاحبان اور وکلاء اس موقع پر چیف جسٹس پشاور ہائی کورٹ کے ہمراہ تھے۔

مزید :

کراچی صفحہ اول -