جو اپنی بیٹیوں کو اپنا نام دینے سے ڈرتے ہیں ،انہیں بتانا چاہتا ہوں کہ ہم اپنی بیٹیوں کو عزت بھی دیتے ہیں اور تحفے بھی :طارق فضل چوہدری

جو اپنی بیٹیوں کو اپنا نام دینے سے ڈرتے ہیں ،انہیں بتانا چاہتا ہوں کہ ہم اپنی ...
جو اپنی بیٹیوں کو اپنا نام دینے سے ڈرتے ہیں ،انہیں بتانا چاہتا ہوں کہ ہم اپنی بیٹیوں کو عزت بھی دیتے ہیں اور تحفے بھی :طارق فضل چوہدری

  

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک )مسلم لیگ ن کے رہنما طارق فضل چوہدری نے کہا ہے کہ آج عدالت میں ثابت ہوا کہ مریم نواز زیر کفالت نہیں ،جو اپنی بیٹیوں کو اپنا نام دینے سے ڈرتے ہیں ،انہیں بتانا چاہتا ہوں کہ ہم اپنی بیٹیوں کو عزت بھی دیتے ہیں اور تحفے بھی ،یہ ہمارے اعلیٰ اقدار ہیں ۔ان کا کہنا تھا کہ ہماری درخواست پر اب سپریم کورٹ اس کیس کو روزانہ کی بنیادوں پر سن رہی ہے ۔

”میں نہ جانوں، مجھے نہیں پتہ، ابا جی نے کیا ہے “ سلمان بٹ کے پاس قانونی بات ختم، اب سیدھی سیدھی رحم کی اپیل کرنے جا رہے ہیں: فواد چوہدری

سپریم کورٹ میں پانامالیکس کیس کی سماعت میں وقفے کے دوران میڈ یا سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ آج کی کارروائی میں عدالت نے ہمارے موقف کی تائید کرتے ہوئے یہ بات کی ہے کہ وزیر اعظم نواز شریف اس کیس میں ملزم نہیں ہیں ،یہ وہ نقطہ ہے جسے مسلم لیگ ن پہلے دن سے کہہ رہی ہے کہ پاناما لیکس میں وزیراعظم کا نام نہیں ہے ۔ان کا کہنا تھا کہ پاناما لیکس میں وزیراعظم کے بچوں کا ذکر آیا ہے تو ان فلیٹس کی پوری منی ٹریل عدالت کو فراہم کی جائے گی اور اس سے متعلق تمام دستاویزی ثبوت فراہم کیے جائیں گے ۔انہوں نے کہا کہ آج عدالت میں ثابت ہوا کہ مریم نواز وزیراعظم کی زیر کفالت نہیں ہیں ،اگر مریم نواز وزیراعظم کے ساتھ رہ رہی ہیں تو اس کا مطلب یہ نہیں کہ وہ وزیراعظم کی زیر کفالت ہیں ۔عمران خان پر طنز کرتے ہوئے طارق فضل چوہدری نے کہا کہ جو لوگ اپنی بیٹیوں کو اپنا نام دینے سے ڈرتے ہیں ،انہیں یہ بتا نا چاہتا ہوں کہ ہم اپنی بیٹیوں کو عزت بھی دیتے ہیں اور تحفے بھی دیتے ہیں ،یہ ہمارے اعلیٰ ترین اقدار ہیں ۔

مزید :

قومی -